Today: Thursday, November, 23, 2017 Last Update: 03:49 am ET

  • Contact US
  • Contact For Advertisment
  • Tarrif
  • Back Issue

Latest News

دہلی میں کسی بھی ریہڑی پٹری و الے کو ہٹانے پر پابندی عائد

 دہلی میں کسی بھی ریہڑی پٹری و الے کو ہٹانے پر پابندی عائد

 
نئی دہلی ،9ستمبر ( ایس ٹی بیوو)دہلی ہائی کورٹ نے آج ایک اہم فیصلے میں دہلی میں کسی بھی ریہڑی پٹری و الے کو ہٹانے پر پابندی عاید کر دی ہے اور اس سلسلے میں لیفٹننٹ گورنر، دہلی سرکاردہلی پولس اور تینوں ایم سی ڈی کو نوٹس جاری کر کے ان سے جواب طلب کیا ہے۔ عدالت نے یہ فیصلہ آج پردیش کانگریس کے صدر اجے ماکن کی پٹیشن پر سماعت کے دوران دیا۔عدالت کے اس حکم کے بعد اب دہلی پولس اور ایم سی ڈی دہلی میں کسی ریہڑی پٹری والے کو نہیں ہٹا پائیں گی۔عدالت نے واضح ہدایت دی ہے کہ جب تک ان ریہڑی پٹری والوں کی گنتی کا سروے مکمل نہیں ہوتا اور دہلی سرکار اس کے تعلق سے کوئی پالیسی وضع نہیں کر دیتی تب تک کوئی بھی کارروائی نہیں ہوگی۔ اجے ماکن نے پٹیشن پر عدالت نے دہلی پولس ، ایم سی ڈی اور دہلی سرکار سے جواب طلب کیا ہے کہ کیا وہ سروجنی نگر، لودھی روڈ، قرول باغ اور لاجپت نگر وغیرہ میں ریہڑی پٹری والوں کو ہٹا رہے ہیں ؟سروجنی نگر میںپٹری لگانے والی طاہرہ کا کہنا ہے کہ پولس نے انہیں 15اگست کے موقع پر سیکورٹی کا حوالہ دے کر پٹری لگانے سے روک دیاتھا لیکن جب 16اگست کے بعد انہوں نے پٹری لگانے کی کوشش کی توانہیں پٹری نہیں لگانے دی گئی ۔ ھاہرہ کا کہنا ہے کہ پولس ان لوگوں کے ساتھ جانوروں جیسا سلوک کرتی ہے۔ کئی وینڈروں کا الزام ہے کہ دہلی پولس اور ایم سی ڈی کے لوگ مل کر پرانے وینڈروں کو ہٹا رہے ہیں جبکہ ان کی جگہ پیسہ لے کر نئے وینڈروں کوبیٹھایا جا رہا ہے۔ عدالت میں اس معاملے کی سماعت اب 27ستبر کو ہوگی جس میں دہلی سرکار اور ایم سی ڈی کے جواب سے یہ پتہ لگ سکے گا کہ سروے کب تک مکمل ہوگا اور ر پالیسی کب تک وضع کی جا سکے گی۔ 
 
...


Advertisment

Advertisment