Today: Thursday, November, 22, 2018 Last Update: 01:19 am ET

  • Contact US
  • Contact For Advertisment
  • Tarrif
  • Back Issue

SPORTS NEWS   

آخرکار یک روزہ سیریز پر نیوزی لینڈ نے کیا قبضہ

 

ابو ظبی ، 20 دسمبر (یو این آئی) کپتان کین ولیم (97) اور راس ٹیلر (88) کی زبردست اننگز کے بعد میٹ ہنری (30 رنز پر پانچ وکٹ) کی بہترین بولنگ کی مدد سے نیوزی لینڈ نے پانچویں اور آخری ون ڈے میں پاکستان کو 68 رنز سے شکست دے کر 3۔2 سے سیریز اپنے نام کر لی ہے۔ون ڈے سیریز کے جمعہ کو دن رات کے کھیلے گئے آخری میچ میں نیوزی لینڈ نے پہلے بلے بازی کرتے ہوئے 50 اوورز میں چار وکٹ پر 275 کا مضبوط اسکور کھڑا کیا۔ لیکن ہدف کا تعاقب کرنے اتری پاکستان کی ٹیم 433 اوور میں 207 کے اسکور پر ڈھیر ہو گئی اور میچ کے ساتھ سیریز گنوا بیٹھی۔نیوزی لینڈ نے چوتھا ون ڈے قریبی فرق سے جیت کر سیریز میں 2۔2 سے برابری کرکے آخری میچ کو فیصلہ کن بنا دیا تھا۔آسٹریلیا کے ساتھ اگلے سال آئی سی سی ون ڈے ورلڈ کپ کے میزبان نیوزی لینڈ کی جانب سے کھلاڑیوں نے بہترین مظاہرہ کیا ۔ ولیم نے 119 گیندوں میں آٹھ چوکوں کی مدد سے سب سے زیادہ 97 رن بنائے جبکہ ٹیلر نے 95 گیندوں میں پانچ چوکے اور ایک چھکا لگا کر ناٹ آؤٹ 88 رنز ٹھونکے۔دونوں بلے بازوں نے تیسرے وکٹ کے لیے 116 رنز کی مضبوط پارٹنرشپ کی ۔اس کے علاوہ ڈین براؤنلی نے 34 اور ٹام لاتھم نے ناٹ آؤٹ 22 رنز بنائے۔ پاکستان کی جانب سے محمد عرفان نے دو وکٹ لیے جبکہ ذوالفقار بابر اور شاہد آفریدی کو ایک ایک وکٹ ملی۔ پاکستان کی جانب سے احمد شہزاد نے 54 اور حارث سہیل نے 65 رنز کی بہترین اننگ کھیلی۔ لیکن اس کے علاوہ زیادہ تر بلے باز بڑا سکور بنانے سے چوک گئے۔ نیوزی لینڈ کی جانب سے ینری نے نو اوورز میں 30 رنز دے کر پاکستان کے پانچ وکٹ حاصل کئے۔ ناتھن میک کولم نے 59 رن پر دو وکٹ لیے۔ ہینری مین آف دی میچ رہے جبکہ کیوی کپتان ولیم مین آف دی سیریز رہے۔عالمی کپ سے عین پہلے اسے مسلسل تیسری ایک روزہ سیریز میں شکست ہوئی ہے، وہ بھی ایسی ٹیم کے ہاتھوں جو نہ صرف اپنے کپتان اور تمام اہم کھلاڑیوں کے بغیر کھیلی، بلکہ نامانوس حالات میں سیریز میں خسارے میں جانے کے باوجود جیت گئی۔ نیوزی لینڈ کے خلاف آخری ایک روزہ میں پاکستان 68 رنز سے شکست کھانے کے بعد نہ صرف سیریز ہار گیا بلکہ عالمی درجہ بندی میں اپنی بدترین حالت یعنی ساتویں مقام پر چلا گیا ہے۔ مارٹن گپٹل کی ناکامی کے بعد ولیم سن نے میدان میں آتے ہی کھیل کا نقشہ پلٹ دیا۔ انہوں نے دوسری وکٹ ڈین براؤنلی کے ساتھ 66 رنز کا اضافہ کیا اور پھر تجربہ کار روس ٹیلر کے ساتھ مل کر پاکستان کے لیے ایک بڑے ہدف کی راہ ہموار کی۔ دونوں کھلاڑیوں نے تیسری وکٹ پر116 رنز جوڑے۔ بدقسمتی سے ولیم سن اپنی مسلسل دوسری سنچری مکمل نہ کرسکے اور 97 رنز بنانے کے بعد اپنے پاکستانی ہم منصب کی دن کی واحد وکٹ بن گئے۔ ولیم سن نے 119 گیندوں پر 8 چوکوں کا سہارا لیا ۔

 

 

...


Advertisment

Advertisment