Today: Wednesday, November, 14, 2018 Last Update: 11:34 pm ET

  • Contact US
  • Contact For Advertisment
  • Tarrif
  • Back Issue

SPORTS NEWS   

آسٹریلیائی گیندبازوں نے ٹیم انڈیا کوسکھائے بلے بازی کے گر

 

لوور آرڈر کے بلے بازوں اوراسمتھ کی سنچری سے آسٹریلیا نے 97رن کی سبقت حاصل کی ،ہندوستان نے وجے کو کھوکر 71بنائے

برسبین،19 دسمبر (یو این آئی)کپتان اسٹیون اسمتھ (133) کے شاندار سنچری کے بعد لوور آرڈر کے بلے بازوں کی شاندار کارکردگی کی بدولت آسٹریلیا نے ہندوستان کے خلاف دوسرے کرکٹ ٹسٹ کے تیسرے دن جمعہ کو پہلی اننگ میں 505 رن کا بڑا اسکور بناکر ہندوستان کو دباؤ میں مبتلا کردیا ہے۔ہندوستانی گیند بازوں نے ایک وقت آسٹریلیا کے چھ وکٹ 247 رن پر اور آٹھ وکٹ 398 رن پر گرادیئے تھے لیکن لوورآرڈر کے بلے بازوں نے ہندوستانی گیند بازوں کی زبردست دھنائی کرتے ہوئے آسٹریلیا کو 500 کے پار پہنچادیا۔ مشیل جانس ے 93 گیندوں میں 88 رن، مشیل اسٹارک نے 59 گیندوں میں 62 رتن، ناتھن لیون نے 52 گیندوں پر ناٹ آؤٹ 32 رن بناکر میزبان ٹیم کو مضبوط پوزیشن میں پہنچادیا۔آسٹریلیا کی پہلی اننگ کل 4ء109 اووروں میں 505 کے اسکورپر ختم ہوئی اور میزبان ٹیم کو 97 رنوں کی اہم سبقت حاصل ہوگئی۔ ہندوستان نے اپنی دوسری اننگ میں کا کھیل ختم ہونے تک 23 اووروں میں ایک وکٹ کھوکر 71 رن بنالئے۔ ہندوستانی ابھی آسٹریلیا کے اسکور سے 26 رن پیچھے ہے اور اس کے پاس نو وکٹ باقی ہیں۔ہندوستان نے پہلی اننگ میں سنچری لگانے والے اوپنر مرلی وجے (27) کا اہم وکٹ کھودیا ہے۔ لیکن شکھر دھون 26 اورچتیشور پجارا 15 رن بناکر کریز پر موجود ہیں۔ ہندوستان کو میچ کے چوتھے دن زبردست کھیل کا مظاہرہ کرنا ہوگا تاکہ آسٹریلیا پہلی اننگ کی سبقت کا فائدہ نہ اٹھالے۔وجے نے دوسری اننگ میں بھی قابل بھروسہ ابتداء کی اور جانسن کی گیندوں پر کچھ بہترین چوکے لگائے۔ لیکن بائیں ہاتھ کے تیز گیند باز اسٹارک کی ایک گیند کو کھیلنے میں شش و پنج میں مبتلا ہونے کے باعث اسے اسٹمپ پر کھیل گئے اور بولڈ ہوگئے۔ وجے نے 39 گیندوں کی اپنی اننگ میں چار چوکے لگائے۔ ان کا وکٹ 41 کے اسکور پر گرا۔اس سے پہلے آسٹریلیا کے لور آرڈر بلے بازوں جانسن (88) اور اسٹارک (52)کی بہترین اننگ نے مضبوطی فراہم کی جبکہ پہلی بار کپتانی سنبھالنے والے اسمتھ نے شاندار 133 رن بنائے۔ تیز گیند باز ایشانت شرما نے 23 اووروں میں 117 رن دے کر تین وکٹ لئے، آف اسپنر اشون نے 4ء33 اوروں میں 128 رن دے کر دووکٹ اور ورون آرون نے 26 اووروں میں 145 رن دے کر دو وکٹ لئے۔ امیش یادو نے 25 اووروں میں 101 رن دے کر تین کھلاڑیوں کو آؤٹ کیا۔ یہ وکٹ انہوں نے کل لی تھی۔آسٹریلیا نے صبح اپنی پہلی اننگز کا آغاز 221 رنز پر چار وکٹ سے آگے کیا تھا۔ اس وقت اسمتھ 65 اور مشیل مارش 07 رن پر ناٹ آؤٹ تھے۔ 25 سالہ اسمتھ نے ٹیم کے لیے رنز رفتار کو برقرار رکھا اور 19گیندوں میں 13 چوکے اور دو چھکے لگا کر 133 رنز کی اننگز کھیلی۔وہ اسی کے ساتھ 1978 میں گراہم ییلپ کے بعد پہلے آسٹریلوی کپتان بن گئے ہیں جنہوں نے اپنی ڈیبو کپتانی ٹیسٹ میں سنچری لگائی ہے۔ اسمتھ کی یہ سیریز کی دوسری سنچری ہے۔ا یڈیلیڈ ٹیسٹ میں انہوں نے ناٹ آؤٹ 162 رنز کی اننگز کھیلی تھی۔اسمتھ نے چوتھے وکٹ کے لئے شان مارش کے ساتھ 87 اور پھر ساتویں وکٹ کے لیے جانسن کے ساتھ 148 رنز کی مضبوط پارٹنرشپ بھی کی۔ آسٹریلیا کی صبح کے سیشن میں 247 رنز تک اپنے دو وکٹ گنوانے کے بعد صورتحال کافی کمزور ہو گئی تھی۔ لیکن پھر نچلے آرڈر کے بلے بازوں نے ٹیم کی پوزیشن کو سنبھالا۔آٹھویں نمبر پر بلے بازی کے لیے اترے جانسن نے 93 گیندوں میں 13 چوکے اور ایک چھکا لگا کر 88 رنز کی زبردست اننگز کھیلی جبکہ ا سٹارک نے نویں نمبر پر کھیلتے ہوئے نصف سنچری بنائی ۔ا سٹارک نے 59 گیندوں میں چھ چوکے بھی لگائے۔ ناتھن لیون (23) اور اسٹارک نے نویں وکٹ کے لیے 56 رنز کی شراکت بھی نبھائی ۔ اسٹارک کی یہ چوتھی ٹیسٹ نصف سنچری ہے۔ اس کے علاوہ ہندستان کو پہلی اننگز میں پانچ جھٹکے دینے والے جوش ہیزل وڈ نے ناٹ آؤٹ 32 رن بنائے۔ لیون نے تین چوکے اور ہیزل وڈ نے سات چوکے لگائے۔دن کا پہلا جھٹکا آسٹریلیا کو ایشانت نے دیا جب انہوں نے مشیل مارش کو 11 کے اسکور پر بولڈ کر دیا۔ اس کے بعد کچھ ہی دیر بعد آرون نے بریڈ ہیڈن (06) کو سستے میں پجارا کے ہاتھوں اکیچ کراکر میزبان ٹیم کو دوسرا جھٹکا دیا۔ اگرچہ اسمتھ نے سب سے زیادہ نقصان پہنچایا اور آخر کار ایشانت نے آسٹریلوی کپتان کو آٹھویں بلے باز کے طور پر آؤٹ کرکے پویلین بھیجا۔اسمتھ کا آؤٹ ہونا آسٹریلیا کیلئے کافی مہلک لگ رہا تھا اور اس وقت ٹیم صرف 398 کے اسکور پر تھی۔ لیکن نچلے آرڈر کے بلے بازوں نے گابا کی پچ پر کمال کا مظاہرہ کیا اور چھوٹی چھوٹی اہم شراکت داری کیں۔ آسٹریلیا کے مہلک تیز گیند بازوں میں سے ایک جانسن نے بلے سے زبردست مظاہرہ کیا اور نصف سنچری لگائی ۔ لیکن پھر ایشانت کی گیند پر وہ مہندر سنگھ دھونی کے ہاتھوں اسٹمپ کے پیچھے لپکے گئے۔آف اسپنر اشون نے اسٹارک کو آخری بلے باز کے طور پر آؤٹ کیا جبکہ نویں نمبر بلے باز کے طور پر لیون کا وکٹ آرون نے لیا۔ آرون نے روہت شرما کے ہاتھوں لیون کو کیچ کراکر پویلین بھیجا۔

 

 

...


Advertisment

Advertisment