Today: Monday, November, 19, 2018 Last Update: 11:19 pm ET

  • Contact US
  • Contact For Advertisment
  • Tarrif
  • Back Issue

SPORTS NEWS   

ہیوز کی حالت میں فی الحال بہتری کے آثار نہیں

 

ہیوز کا واقعہ غیرمعمولی، لیکن کرکٹ ہمیشہ سے خطرناک رہا ہے : لارا * ہیوز حادثہ کے بعد ایبوٹ کی کاؤنسلنگ

سڈنی۔ 26 نومبر (یو این آئی) میچ کے دوران زخمی ہوئے آسٹریلیائی بلے باز فلپ یوز کی حالت میں اب بھی کوئی بہتری کے اشارے نہیں ہیں اور ایمرجنسی سرجری کے بعد ابھی ان کے اور اسکین کئے جائیں گے۔ شیفیلڈ شیلڈ میچ کے دوران یوز کے سر میں ایک بانسر لگنے سے شدید چوٹیں آ گئی تھیں جس کے بعد انہیں نازک حالت میں اسپتال میں داخل کرایا گیا اور ان کی سرجری کی گئی۔ ہیوز کی حالت میں فی الحال بہتری کے کوئی اشارے نہیں ملے ہیں اور ڈاکٹر ا بھی ان کے مزید اسکین کریں گے ۔ یوز کی منگل کو ایمرجنسی سرجری کی گئی تھی۔کرکٹ آسٹریلیا (سی اے) نے یوز کی موجودہ حالت کو دیکھتے ہوئے شیفیلڈ شیلڈ کے اگلے راؤنڈ کو منسوخ کر دیا ہے۔ سی اے کے ٹیم پرفارمنس ایگزیکٹو جنرل منیجر پیٹ ووارڈ نے ایک بیان میں کہا کہ ہم نے کھلاڑیوں اورسی اے سے بات کی ہے کہ آخر کھلاڑیوں کا اس وقت کیا خیال ہے۔ مجھے نہیں لگتا کہ اس وقت ہمیں کرکٹ کھیلنا چاہیے ۔انہوں نے کہا کہ م اس مشکل وقت میں تمام کھلاڑیوں کو کاؤنسلنگ اور حمایت دینے کی کوشش کر رہے ہیں۔ یوز کو بھی ہر ممکن علاج فراہم کرنے کی کوشش کی جا رہی ہے۔ ٹیم کے تمام ساتھی اور پوری دنیا کے کھلاڑی اس وقت یوز کے کنبہ کے ساتھ ہیں۔

دوسری جانب ویسٹ انڈیز کے عظیم کرکٹر برائن لارا نے کہا کہ آسٹریلیائی بلے باز فلپ یوز جس چوٹ کی وجہ سے اسپتال میں تشویشناک حالت میں داخل ہیں وہ ایک غیرمعمولی واقعہ ہے لیکن اس بات کو فراموش نہیں کیا جا سکتا کہ کرکٹ ہمیشہ سے ایک خطرناک کھیل رہا ہے۔شیفیلڈ شیلڈ میچ کے دوران منگل کو سین ایبوٹ کے باؤنسر سے زخمی ہوئے یوز کو اسپتال میں داخل کرایا گیا ہے جہاں ایمرجنسی سرجری کے بعد اب بھی ان کی حالت تشویشناک ہے۔لارا نے کہا کہ یہ بہت بدقسمتی کی بات ہے۔ بلے باز نے اس کھیل کی خطرناک شکل کا سامنا کیا۔ ہم صرف ان کے لئے دعا کرسکتے ہیں۔ میں جانتا ہوں کہ پورا آسٹریلیا اور دنیائے کرکٹ ان کے صحت مند ہونے اور واپس میدان پر کھیلنے کی دعا کر رہی ہے۔ مجھے لگتا ہے کہ یہ ایک کھیل ہے اور آپ کو ہمیشہ خطرہ اٹھا کر کھیلنا ہوتا ہے ۔انہوں نے کہا کہ میں نے صبح ان کے اچھا ہونے کی دعا کی ۔ لارا نے بتایا کہ کئی بار شعیب اختر اور گلین میگرا کی تیز گیندیں ان کے سر پر لگی ہے لیکن بلے باز کو یہ تسلیم کرنا پڑتا ہے کہ تیز گیند بازی کھیل کا حصہ ہے۔لارا نے کہا کہ انہوں نے گزشتہ چند برسوں میں اسے دور کرنے کی کوشش کی ہے لیکن یہ تیز گیند بازی کا حصہ ہوتی ہے اور گیند بازوں کو ایسا کرنے سے روکنا بہت مشکل ہے کچھ بلے باز ہیں جو اس کی مخالفت کرتے ہیں لیکن مجھے نہیں لگتا کہ اس سے گیند بازوں اور قواعد بنانے والوں پر کچھ فرق پڑنے والا ہے۔لارا نے اپنی ایک ٹیم کے ساتھی فل سمنس کے سر میں لگے ایک شارٹ گیند کا ذکر کرتے ہوئے کہا کہ مجھے لگتا ہے کہ ان کے پاس یلمیٹ نہیں تھا اور اسی طرح انہیں بھی دماغ کی سرجری کرانی پڑ ی اور وہ 12 ماہ بعد کرکٹ کے میدان پر واپس آسکے۔ پھر سے واپسی کرنا بہت مشکل ہوتا ہے ۔

آسٹریلیائی بلے باز فلپ یوزکو اپنے ایک بانسر سے اسپتال پہنچانے والے تیز گیند باز سین ایبوٹ اس حادثہ کے بعد بہت ہی مایوس اور بے حد ذہنی دباؤ سے گزر رہے ہیں جس کے لئے ان کی کاؤنسلنگ کی جا رہی ہے۔مقامی میڈیا کے مطابق ایبوٹ اس پورے حادثہ کے بعد ذہنی دباؤ میں ہیں اور اس کے لیے کرکٹ آسٹریلیا (سی اے) کی طرف سے ان کی اؤنسلنگ کی جا رہی ہے۔ خود سی اے کے ٹیم پرفارمنس ایگزیکٹو جنرل منیجر پیٹ ووارڈ نے ایک بیان جاری کرکے بتایا کہ یوز کے زخمی ہونے کے بعد بورڈ ان کی ٹیم کے ساتھیوں سے بات کر رہا ہے اور کھلاڑیوں کی اؤنسلنگ بھی کی جا رہی ہے۔سابق آسٹریلیائی تیز گیند باز بریٹ لی نے اس کی تصدیق کرتے ہوئے مقامی چینل سے ا کہ اس وقت ایبوٹ بہت تناؤ میں ہیں۔ وہ بہت ہی برے دور سے گزر رہے ہیں۔ میں اتنا ہی کہہ سکتا ہوں کہ کوئی بھی گیندباز ایسا جان بوجھ کر نہیں کرتا۔ وہ بلے باز کو نقصان پہنچانے کی کوشش کبھی نہیں کرتا ۔منگل کو سڈنی میں شیفیلڈ شیلڈ میچ کے دوران جنوبی آسٹریلیا کی جانب سے بلے بازی کر رہے یوز کو نیو ساؤتھ ویلز کے فاسٹ بولر ایبوٹ کے ایک بانسر سے سر میں گہری چوٹ لگ گئی تھی اس کے بعد 25 سالہ بلے باز کو اسپتال میں داخل کرایا گیا جہاں ان کے سر میں شدید زخم ہونے کی تصدیق ہوئی ہے اور ان کی ایمرجنسی سرجری بھی کی گئی ہے ۔ ہیوزکی حالت اب تک نازک ہے۔ اس واقعہ کے بعد سی اے نے شیفیلڈ شیلڈ کے اگلے راؤنڈ کے میچ منسوخ کر دئیے گئے ہیں۔

 

 

...


Advertisment

Advertisment