Today: Friday, September, 21, 2018 Last Update: 09:08 am ET

  • Contact US
  • Contact For Advertisment
  • Tarrif
  • Back Issue

SPORTS NEWS   

صحرا میں بوڑھے شیر نے پھر کیا کنگارؤں کا شکار

 

آسٹریلیا کے خلاف یونس خان کی مسلسل تیسری سنچری،اظہر علی نے بھی بنائی سنچری،تیسرے وکٹ پر208رن کی شاندار رفاقت سے پہلے دن ہی گرین شرٹس کی پوزیشن مستحکم،آسٹریلیا کے خلاف 90سال بعد کسی بلے باز نے لگائی مسلسل تین سنچری

ابوظبی،30اکتوبر (یو این آئی) پاکستان کے تجربہ کار بلے باز یونس خان (ناٹ آؤٹ111) اور اظہر علی (101)کی تیسرے وکٹ کے لئے 208 رن کی شاندار رفاقت کی بدولت پاکستان نے آسٹریلیا کے خلاف دوسرے ٹسٹ کے پہلے دن اپنی اننگ میں دو وکٹ کے نقصان پر 304 رن بنالئے ہیں۔پاکستان کی جانب سے یونس خان نے مسلسل تیسری سنچری بناتے ہوئے پاکستان کو بڑا اسکور کرنے میں مدد کیا۔ انہوں نے 155 گیندو ں کا سامنا کیا جس میں انہو ں نے دس چوکوں اور ایک چھکے کی مدد سے ناٹ آؤٹ 111 رن بنائے جبکہ اظہر علی نے محتاط بلے بازی کرتے ہوئے 223 گیندوں می چھ چوکوں کی مدد سے ناٹ آؤٹ 101 رن کا اسکور کیا۔پاکستان کے کپتان مصباح الحق نے ٹاس جیت کر پہلے بلے بازی کرنے کا فیصلہ کیا۔ ٹیم کی جانب سے احمد شہزاد (35)اور محمد حفیظ (45)نے محتاط بلے بازی کرتے ہوئے پاکستانی اننگ کو اچھی شروعات اور بنیاد فراہم کی۔حالانکہ سلامی بلے باز احمد شہزاد اٹھارہویں اوور میں ناتھن لیون کے گیند پر ایل بی ڈبلیو آؤٹ ہوگئے۔ انہوں نے 64گیندوں میں تین چوکوں کی مدد سے 35 رن بنائے۔دونوں بلے بازوں نے ابتدائی رفاقت کے لئے 57 رن جوڑے۔ بعدازاں محمد حفیظ کا ساتھ دینے کے لئے اظہر علی نے آگے مورچہ سنبھالا اور دونوں بلے بازوں نے دوسرے وکٹ کیلئے 39 رن کی رفاقت نبھائی۔مشیل جانسن نے بریڈ ہیڈن کے ہاتھوں محمد حفیظ کو کیچ کراکرآسٹریلیا کو دوسری کامیابی دلائی۔ لیکن دوبئی میں کھیلے گئے پہلے ٹسٹ میچ کی دونوں اننگز میں شاندار سنچری بنانے والے تجربہ کار بلیباز محمد یونس نے اظہر علی کے ساتھ تیسرے وکٹ کی رفاقت کے لئے شاندار بلے بازی کرتے ہوئے آسٹریلیائی بلے باز وں کو بے بس کردیا۔پہلے دن کا کھیل ختم ہونے تک دونوں بلے باز کیریز پر ڈٹے ہوئے تھے۔ پاکستان نے پہلے دن کے پہلے سیشن میں بیاسی رن ، دوسرے سیشن میں 76 جبکہ تیسرے سیشن میں تیز رفتار رن بنائے۔لنچ تک پاکستان نے ایک وکٹ کے نقصان پر 82 رن بنالئے تھے۔ جبکہ چائے کے وقفے پر اس کا اسکور دو وکٹ کے نقصان پر 158 رن تھا۔پاکستان نے 34 اعشاریہ تین اوور میں سو رن جبکہ باسٹھ اعشاریہ پانچ اوور میں دو سو رن مکمل کئے۔اس سے قبل یونس خان نے 128 گیندوں میں سولہ چوکولں اور ایک چھکے کی مدد سے اپنے کیریر کی 27ویں سنچری مکمل کی۔ علاوہ ازیں انہو ں نے مسلسل تین سنچری بنانے والے اپنے ملک کے باوقار گروپ میں شمولیت کرلی جس میں پہلے سے مدثر نظر، محمد یوسف اور ظہیر عباس شامل ہیں۔آسٹریلیا کے لئے یہ 90ویں سال بعد پہلا موقع ہے جب کسی بلے باز نے اس کے خلاف مسلسل تین سنچریاں بنائی ہیں۔ محمد حفیظ کے آؤٹ ہونے کے بعد اظہر علی نے جہاں محتاط بلے بازی کا مظاہرہ کیا وہیں یونس خان نے جارحانہ بلیبازی کا مظاہرہ کیا۔ آسٹریلیا نے اس جوڑی کو توڑنے کیلئے اپنے آٹھ گیند بازوں کا استعمال کیا لیکن کسی کو بھی اس میں کامیابی حاصل نہیں ہوسکی۔محمد یونس اور اظہر علی نے تیسرے وکٹ کی رفاقت کیلئے 320 گیندوں میں اپنے دو سو رن مکمل کئے۔ اس میں یونس خان 110 اور اظہر علی 81 رن کے ساتھ موجود تھے۔

...


Advertisment

Advertisment