Today: Wednesday, November, 21, 2018 Last Update: 04:50 am ET

  • Contact US
  • Contact For Advertisment
  • Tarrif
  • Back Issue

SPORTS NEWS   

آفریدی نے یونس خان کی تعریف کی

 

یونس خان ورلڈ کپ میں شرکت کے متمنی

کراچی،27 اکتوبر (یو این آئی) پاکستان کی ٹی ٹوئنٹی ٹیم کے کپتان شاہد آفریدی نے کہا ہے کہ یونس خان نے آسڑیلیا کے خلاف پہلے ٹیسٹ کی دونوں اننگز میں سنچریاں بنا کر ثابت کر دیا ہے کہ وہ بڑے کھلاڑی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ قومی ٹیم میں سینئر کھلاڑیوں کو عز ت ملنی چاہئے اور جونیئرز کو کپتانی کی خواہش ترک کر کے کرکٹ پر توجہ دینی چاہئے۔ غیر ملکی خبر رساں ادارے سے گفتگو کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ ورلڈ کپ 2015ء میں قومی ٹیم کچھ بھی کر سکتی ہے۔ اگر پاکستان کرکٹ کے لئے کچھ بڑا کرنا ہے تو تمام کھلاڑیوں کو کھل کر بغیر ڈرے کھیلنا ہو گا۔ شاہد آفریدی نے کہا کہ ٹی ٹوئنٹی آسان فارمیٹ نہیں ہے۔ 2016ء کیلئے ابھی سے پلان بنا لیا ہے۔ تجربہ کار آل راؤنڈر کے مطابق یہ ہو سکتا ہے کہ وہ ون ڈے کرکٹ سے ریٹائرمنٹ لے کر اپنی پوری توجہ صرف ٹی ٹوئنٹی پر مرکوز کریں لیکن اس بارے میں کوئی بھی فیصلہ 2015ء میں اپنی کارکردگی کو دیکھنے کے بعد کیا جائے گا۔ انہوں نے مزید کہا کہ کرکٹ کے ذریعے پاکستان اور ہندستان کے باہمی تعلقات میں بہت زیادہ بہتری آ سکتی ہیں۔ ویسے بھی دونوں ممالک کے شائقین چاہتے ہیں کہ کھلاڑی ایک دوسرے کے ممالک میں جا کر پہلے کی طرح کرکٹ کھیلیں۔ آسٹریلیا کے خلاف ٹیسٹ میں اسپنرز کی کارکردگی کو سراہتے ہوئے شاہد آفریدی نے کہا کہ موجودہ لاٹ میں یاسر شاہ، ذوالفقار بابر اور رضا حسن بہترین ٹیلنٹ ہیں۔
دوسری جانب دبئی میں آسٹریلیا پر پہلے ٹیسٹ میں پاکستان کی جیت کے دوران مین آف دی میچ بنے تجربہ کار بلے باز یونس خان اگلے سال ہونے والے عالمی کپ میں کھیلنا چاہتے ہیں۔ سلیکٹرز نے حالانکہ انہیں آسٹریلیا کے خلاف ہونے والی ون ڈے سیریز کے لئے ٹیم میں جگہ نہیں دی ہے۔ دبئی ٹیسٹ کی دونوں اننگز میں سنچری بنانے والے یونس نے کہا کہ اگر سلیکٹر ان پر بھروسہ دکھاتے ہیں تو وہ آسٹریلیا اور نیوزی لینڈ میں ہونے والے عالمی کپ میں کھیلنے کو تیار ہیں۔ یونس نے جیو سپر چینل سے کہا کہ مجھے لگتا ہے کہ سلیکٹروں کو ٹیم منتخب کرتے ہوئے عمر، پوزیشن یا رنگ کو ذہن میں نہیں رکھنا چاہئے۔ بلے باز کی عمر چاہے کچھ بھی ہو، اگر وہ فارم میں ہے اور میچ فٹ ہے تو اسے ایک روزہ میچوں میں کھیلنے کے لئے منتخب کیا جانا چاہئے۔ یونس نے کہا کہ توجہ اس پر ہونی چاہئے کہ فارم میں چل رہے کھلاڑیوں کو کھلایا جائے۔ عمر کی کوئی حد نہیں ہونی چاہئے۔ اگر کوئی کھلاڑی ورلڈ کپ میں پاکستان کرکٹ کی خدمت کر سکتا ہے تو انتخاب کے لئے اس کے نام پر غور ہونا چاہئے۔ یہ کسی میچ یا مقابلہ کے لئے صحیح کمبی نیشن کے ساتھ اترنا ہے۔ دبئی ٹیسٹ کے بعد 26 ٹیسٹ سنچری کے ساتھ پاکستان کی جانب سے سب سے زیادہ سنچری بنانے والے بلے باز یونس نے کہا کہ وہ پاکستان کی جانب سے ون ڈے انٹرنیشنل میچوں میں کھیلنے کو بھی تیار ہیں۔

...


Advertisment

Advertisment