Today: Wednesday, November, 21, 2018 Last Update: 05:18 am ET

  • Contact US
  • Contact For Advertisment
  • Tarrif
  • Back Issue

SPORTS NEWS   

مقابلہ تو دل ناتواں نے ۔۔۔

 

نیوزی لینڈ کی فاتحانہ مہم کو روکنے میں بنگلہ دیش بھی ناکام
بنگلہ دیش کو 3وکٹ سے شکست،محموداللہ کی جرات مندانہ سنچری پر بھاری پڑی گپٹل کی سنچری،ٹیلر کی نے بھی لگائی نصف سنچری
ہیملٹن13مارچ(آئی این ایس انڈیا)محموداللہ نے مسلسل دوسرے میچ میں سنچری لگائی جبکہ قائم مقام کپتان شکیب الحسن نے اہم موقعوں پر وکٹ چٹکائے لیکن اس کے باوجود بنگلہ دیش آئی سی سی کرکٹ عالمی کپ میں آج یہاں نیوزی لینڈ کی فاتحانہ مہم روکنے میں ناکام رہا جس نے مارٹن گپٹل کی سنچری کی مدد سے تین وکٹ سے جیت درج کی۔ محموداللہ نے ناٹ آؤٹ 128رن بنائے جو ان کے کیریئر کا سب سے زیادہ ا سکور ہے۔ انہوں نے سومیاسرکار(51)کے ساتھ تیسرے وکٹ کیلئے 90اور شبیر رحمان (40) کے ساتھ چھٹے وکٹ کیلئے78رنز کی دو اہم شراکت داری نبھائی جس پہلے بلے بازی کی دعوت پانے والے بنگلہ دیش نے سات وکٹ پر 288رن کا مشکل اسکور کھڑا کیا۔نیوزی لینڈ کو پہلی بار اس ٹورنامنٹ میں بڑے ہدف کا سامنا کرنا پڑا اور اس کے لئے یہاں تک پہنچنا آسان نہیں رہا۔اب تک رن بنانے کیلئے جوجھنے والے گپٹل(105)اور راس ٹیلر (56)نے تیسرے وکٹ کے لئے 131رن جوڑ کر ٹیم کو ابتدائی جھٹکوں سے نکالا،بعد میں گرانٹ ایلیٹ(39)اور کوری اینڈرسن (39)نے بھی مفید شراکت دی جس سے نیوزی لینڈ 48.5اوور میں سات وکٹ پر 290رن بنا کر گروپ اے میں اپنے تمام میچ جیتنے میں کامیاب رہا۔نیوزی لینڈ کا پول اے میں سر فہرست جگہ پہلے سے طے ہو گئی تھی لیکن بنگلہ دیش کی شکست کا مطلب ہے کہ وہ اس گروپ سے ممکنہ چوتھے مقام کی ٹیم کے طور پر کوارٹر فائنل میں پہنچے گا۔اس طرح سے اب آخری آٹھ میں اس کا سامنا 19مارچ کو میلبورن میں ہندوستان سے ہونا طے ہے جس نے گروپ بی سے اپنا ٹاپ مقام یقینی کرلیا ہے۔
گپٹل اور ٹیلر نے حالانکہ بنگلہ دیش کے تیز اور ا سپن مخلوط اٹیک کے سامنے سنبھل کر بلے بازی کی اور ٹیم کو بحران سے باہر نکالا، ان میں سے بھی گپٹل نے بنیادی طور پر رن بنانے کا ذمہ اٹھایا۔انہوں نے اپنے کیریئر کی چھٹی سنچری جمائی۔گپٹل نے 100گیند کی اننگز میں 11چوکے اور دو چھکے لگائے۔ٹیلر نے 97گیندیں کھیلیں اور پانچ چوکے لگائے۔ شکیب نے جب پھر گیند سنبھالی تو وہ گپٹل کو روبیل حسین کے ہاتھوں کیچ کرانے میں کامیاب رہے۔نیوزی لینڈ نے اس کے بعد باقاعدہ وقفے میں وکٹ گوائے جس سے بنگلہ دیش کی امید جاگ گئی۔ناصر حسین نے ٹیلر کو جبکہ روبیل نے ایلیٹ کو پویلین بھیجا۔اس کے بعد شکیب نے لیوک روچی(9)کو زیادہ دیر تک نہیں ٹکنے دیا لیکن نمبر آٹھ بلے باز ڈینیل ویٹوری(ناٹ آؤٹ 16)نے دس گیند کی اننگز میں ایک چھکا اور ایک چوکا لگایا جبکہ ساؤتھی(ناٹ آؤٹ 12)نے چھکا لگانے کے بعد فاتح چوکا جمایا۔اس سے پہلے بنگلہ دیش کی اننگزمحمود اللہ کے ارد گرد گھومتی رہی جو انگلینڈ کے خلاف گزشتہ میچ میں 103رنز بنا کر عالمی کپ میں سنچری جڑنے والے پہلے بنگلہ دیشی بلے باز بنے تھے۔انہوں نے 123 گیندیں کھیلی اور 12چوکے اور تین چھکے لگائے ،ان کا اچھا ساتھ دینے والے سرکار نے 58گیندوں کی اپنی اننگز میں سات چوکے جبکہ شبیر نے 23گیندوں کا سامنا کرکے پانچ چوکے اور دو چھکے جمائے۔نیوزی لینڈ کی طرف سے اینڈرسن(43رن دے کر دو وکٹ)، ٹرینٹ بولٹ(56رن دے کر دو وکٹ)اور ایلیٹ(27رن دے کر دو وکٹ) نے دو دو وکٹ حاصل کئے جبکہ ڈینل ویٹوری نے ایک وکٹ لیا۔بنگلہ دیش کی شروعات اچھی نہیں رہی اور اس نے دس اوور کے اندر دونوں سلامی بلے باز امرء القیس(2)اور تمیم اقبال(13)کے وکٹ گنوا دئے، اس سے ٹیم کا اسکور دو وکٹ پر 27رنز ہو گیا۔محمود اللہ بھی جب ایک رن پر تھے تب ٹم ساؤتھی کی گیند پر اینڈرسن نے ان کا کیچ چھوڑا ۔انہوں نے اس کا پورا فائدہ اٹھا کر مشیل میکلینگن کی گیند تھرڈ مین پر کھیل کر 111گیندوں پر اپنی سنچری مکمل کی اور پھر بڑی تعداد میں موجود بنگلہ دیشی حامیوں کا شکریہ ادا کیا۔اس سے پہلے سرکار نصف سنچری مکمل کرنے کے بعد ویٹوری کی گیند پر لانگ آف پر اینڈرسن کو کیچ دے بیٹھے۔ شکیب (23)بھی کچھ وقت کریز پر گزارنے کے بعد اینڈرسن کی گیند پر وکٹ کے پیچھے کیچ دے بیٹھے۔مشفق الرحیم کے 15رنز پر آؤٹ ہو جانے کے بعد محمو داللہ کو شبیر کے طور پر اچھا ساتھی ملا،ان دونوں کی شاندار اننگز سے بنگلہ دیش آخری دس اوورز میں 108رنز حاصل کرنے میں کامیاب رہا۔
 

 

...


Advertisment

Advertisment