Today: Sunday, September, 23, 2018 Last Update: 12:43 am ET

  • Contact US
  • Contact For Advertisment
  • Tarrif
  • Back Issue

SPORTS NEWS   

پانچ میچوں میں 50وکٹ اچھا ریکارڈ ہے :دھونی

 

ہیملٹن، 10 مارچ (یو این آئی) ہندوستانی کرکٹ ٹیم کو اپنی قیادت میں عالمی کپ ٹورنامنٹ کی ریکارڈ نوویں جیت دلانے والے کپتان مہندر سنگھ دھونی نے منگل کو آئرلینڈ کے خلاف فتح کے بعد ٹیم کی مجموعی کارکردگی پر خوشی ظاہر کی اور کہاکہ پانچ میچوں میں 50 وکٹ کا ہندسہ ٹیم انڈیا کے لیے واقعی بڑی کامیابی ہے ۔ہندستان نے عالمی کپ پول بی کے اپنے پانچویں میچ میں آئرلینڈ کو آٹھ وکٹ سے شکست دے دی ۔اگرچہ اس جیت کا نتیجہ غیر ضروری ہو لیکن ریکارڈ کے لحاظ سے یہ اہم تھا ۔دھونی نے میچ کے بعد کہا کہ کوچ نے ہمیں بتایا کہ ہندستان نے پانچ میچوں میں 50 وکٹ کی تعداد حاصل کر لی ہے ۔مجھے لگتا ہے کہ یہ واقعی بڑا اور اہم ریکارڈ ہے جو ظاہر کرتا ہے کہ ہمارے بالر کتنی اچھی گیند بازی کر رہے ہیں ۔انہوں نے ٹیم کی مجموعی کارکردگی کی تعریف کی لیکن خاص طور پر گیند بازوں کو سراہتے ہوئے کہا کہ میں بہت خوش ہوں کہ ہم ایک ٹیم کی طرح کھیل رہے ہیں ۔لیکن میں گیندبازوں کی کارکردگی سے خوش ہوں جنہوں نے مل کر اپنی ذمہ داری ادا کی ہے ۔نہ صرف تین تیز گیند باز بلکہ اسپنر اور پارٹ ٹائمر بھی اچھی گیند بازی کر رہے ہیں ۔کپتان نے کھاکہ ھمارے گیندباز اتنا اچھا کھیل رہے ہیں کہ چار پانچ اوور کے بعد ہی میں اسپنروں کو اتار سکتا ہوں ۔لیکن میں نے پھر بھی ابتدائی 10 اوورز میں تیز گیند بازوں کو موقع دیا ۔ انہوں نے اس میچ میں اپنی پوری صلاحیت کے ساتھ کارکردگی کا مظاہرہ کیا ۔سریش رینا نے بھی تسلی بخش کارکردگی کا مظاہرہ کیا ۔دھونی نے سابق کپتان سورو گنگولی کے ورلڈ کپ میں سب سے زیادہ جیت درج کرنے کے ریکارڈ کو توڑنے کے بارے میں پوچھے جانے پر کہا کہ یقیناًمیں بہت خوش ہوں ۔لیکن ہم صرف اپنی جیت کے سلسلے کو برقرار رکھنا چاہتے تھے ۔سب بہت خوش ہیں کہ ہم نے عالمی کپ میں مسلسل نو جیت درج کرنے کا ریکارڈ اپنے نام کیا ہے ۔ہندستانی کھلاڑی نے کھاکہ میں اوپننگ شراکت سے بھی مطمئن ہوں ۔پہلے مجھے نہیں لگا تھا کہ ایسا ممکن ہوگا کیونکہ یہ ایک مشکل وکٹ ہے اور گیند پہلے رک کر آ رہی تھی لیکن بعد میں اوس کی وجہ سے یہ آرام دہ ہو گئی اور رن بنانا آسان ہو گیا ۔دونوں کھلاڑی ہی رن بنا پائے جو سونے پہ سھاگا ہے ۔دھونی نے ساتھ ہی ٹیم کے طویل عرصے سے گھر سے دور رہنے اور مشکل حالات کے لیے بھی تعریف کی ۔انہوں نے کہا کہ ہم گزشتہ چار ماہ سے گھر سے دور ہیں ۔ٹیسٹ سیریز کے بعد میں جانتا تھا کہ ہمیں یہاں واپس آنا ہے ۔لیکن اس کے باوجود کھلاڑی اچھا کر رہے ہیں اور متحد ہوکر کھیل رہے ہیں ۔ہم یہاں پرتھ سے براہ راست آ رہے ہیں اور اتنے طویل سفر کے بعد کھلاڑیوں کو جیٹ لیگ کا مسئلہ ہے لیکن پھر بھی انہوں نے آگے بڑھ کر اپنا کردار ادا کیا۔

 

...


Advertisment

Advertisment