Today: Friday, September, 21, 2018 Last Update: 09:52 am ET

  • Contact US
  • Contact For Advertisment
  • Tarrif
  • Back Issue

SPORTS NEWS   

انہماک ختم ہونا شکست کا سبب : سائنا

 

برمنگھم، 09 مارچ (یو این آئی) آل انگلینڈ بیڈمنٹن چیمپئن شپ میں تاریخ بنانے سے محروم رہنے کے بعد افسوس میں ڈوبی ہندستانی بیڈمنٹن اسٹار سائنا نہوال نے کہا ہے کہ نروس ہونے کی وجہ سے ان کی توجہ بھٹک گئی اور یہی ان کی شکست کی سب سے بڑی وجہ رہی ۔تیسری سیڈ سائنا نے پہلی بار اس باوقار ٹورنامنٹ کے فائنل میں پہنچ کر تاریخ تو رقم کردی تھی لیکن اتوار کو خطابی مقابلے میں انہیں عالمی چیمپئن اسپین کی کیرولینا مارن سے 21۔16 ،14۔21 ،7۔21 سے شکست کا سامنا کرنا پڑا ۔اس ہار کے ساتھ ہی سائنا کا یہ خطاب جیتنے والی تیسرے ہندوستانی کھلاڑی بننے کا خواب ٹوٹ گیا ۔پرکاش پڈوکون نے 1980 اور موجودہ قومی کوچ پلیلا گوپي چند نے 2001 میں یہ خطاب جیتا تھا ۔فائنل میں شکست کے بعد کافی مایوس دکھائی دے رہی اولپک کانسی کا تمغہ فاتح سائنا نے کہاکہ میرا دھیان ہدف پر مرکوز نہیں رہا ۔میں میچ کو جلد نمٹانا چاہتی تھی اور اس کی وجہ سے مجھ سے غلطیاں ہوئیں۔ فائنل جیسے مقابلے میں جلدی کرنا بالکل صحیح نہیں تھا ۔جب آپ ٹاپ کھلاڑیوں کے ساتھ کھیل رہے ہوں، تو ایسے میں ہر قدم پر آپ کو محتاط رہنا ہوتا ہے ۔سائنا نے کہاکہ دنیا کے ٹاپ کھلاڑیوں کے سامنے کھیلتے وقت ہر مرحلے پر محتاط رہنے کی ضرورت ہوتی ہے ، ایسے میں کسی بھی مرحلے پر کچھ بھی ہو سکتا ہے ۔کھیلتے وقت توجہ بھٹکانا نہیں چاہیے لیکن مجھ سے یہ غلطی ہوئی۔میں اچانک ہی نروس ہو گئی تھی ۔ہندوستانی کھلاڑی نے پہلا گیم جیتنے کے بعد دوسرے گیم میں ایک وقت 10۔6 کی برتری حاصل کرلی تھی لیکن مارن نے جیسے ہی 11۔11 سے برابری حاصل کی اس کے بعد اچانک ہی سائنا کا انہماک ختم ہوگیا اور ان کا کھیل بکھر گیا ۔سائنا سال 2007 سے اس چیمپئن شپ میں کھیل رہی ہیں اور ان کے کیریئر میں یہ پہلا موقع تھا جب وہ اسپین کی کھلاڑی سے ہاریں۔سال 2010 اور 2013 کے سیمی فائنل میں ہارنے والی 24 سالہ سائنا اس بار تاریخ رقم کرتے ہوئے پہلی بار چیمپئن شپ کے فائنل میں پہنچی تھیں۔سائنا نے اس سے پہلے کوارٹرفائنل میں چین کی وانگ یھان اور سیمی فائنل میں چین کی ہی سن یو کو ہرا دیا تھا۔سائنا اس سے پہلے چھٹی رینک کی ہسپانوی کھلاڑی سے تین بار کھیل چکی تھیں اور انہیں ایک میں بھی شکست کا سامنا نہیں کرنا نہیں پڑا تھا۔اس سے پہلے لکھنؤ میں گزشتہ جنوری میں سید مودی بین الاقوامی چیمپئن شپ میں سائنا نے کیرولینا کو شکست دے کر خطاب جیتا تھا ۔آئندہ 17 مارچ کو 25 سال کی ہونے والی سائنا کے پاس خطاب جیت کر خود کو سالگرہ کا بہترین تحفہ دینے کا موقع تھا لیکن فیصلہ کن موقعوں پر لڑکھڑاھٹ اور غلطیوں نے سائنا سے یہ موقع چھین لیا۔
 

 

...


Advertisment

Advertisment