Today: Tuesday, November, 13, 2018 Last Update: 10:42 am ET

  • Contact US
  • Contact For Advertisment
  • Tarrif
  • Back Issue

SPORTS NEWS   

کوارٹر فائنل کا خواب شرمندہ تعبیر کرنے اتریں گے بنگالی ٹائیگرس

 

نیلسن، 4 مارچ(یو این آئی) عالمی کپ کے کوارٹرفائنل میں پہنچنے کا خواب دیکھنے والی بنگلہ دیشی ٹیم کا آئندہ عالمی کپ مقابلہ نیلسن کے میدان پر اسکاٹ لینڈ سے ہوگا تو وہ ہر حال میں جیتنا چاہے گی تاکہ اپنی اس مہم کوتقویت دے سکے ۔اپنے ابتدائی میچ میں افغانستان کو شکست دینے والی بنگلہ دیش کو اگر کوارٹرفائنل کے لئے اپنا راستہ صاف کرنا ہے تو اسے اپنے تین میں سے کم سے کم دو مقابلے جیتنے ہوں گے ۔ نیلسن کے اوول میدان پر اسکاٹ لینڈ سے مقابلے کے بعد اس کا مقابلہ انگلینڈ سے ہونا ہے ۔ ایک روزہ رینکنگ میں نویں مقام پر برقرار بنگلہ دیش عالمی کپ کی دیگر کمزور اور نچلی رینکنگ کی ٹیموِں کے مقابلے کافی مضبوط ہے اور اس نے اس کا ثبوت اپنے ابتدائی مقابلے میں افغانستان کو 105 رن سے شکست دے کر دیا تھا۔ سال 2006 میں اسکاٹ لینڈ کے خلاف کھیلے گئے تین ایک روزہ میچوں میں وہ ایک بار بھی نہیں ہاری ہے ۔موجودہ عالمی کپ میں اب تک کے اپنے تین مقابلے ہارنے والی اسکاٹ لینڈ کا آگے کا سفر اور بھی مشکل ہوگیا ہے ۔ اگر وہ نیلسن میں کھیلے جانے والے اس مقابلے میں بنگلہ دیش کو شکست دے بھی دیتی ہے تو اسے اگلے میچوں میں جیت حاصل کرنا مشکل رہے گا کیونکہ اس کا اگلا مقابلہ گذشتہ سال کی رنراپ سری لنکا اور چار مرتبہ کی عالمی چیمپئن فاتح آسٹریلیا سے ہونا ہے ۔افغانستان کے خلاف کھیلے گئے پچھلے مقابلے میں اسکاٹ لینڈ نے ضرور ایک سنہرا موقع گنوایا تھااور حریف ٹیم کو سخت ٹکر دینے کے بعد بھی وہ میچ صرف ایک وکٹ سے ہار گئی۔ ٹیم کے پاس بہترین گیندباز ہیں لیکن وہ میچ کے ڈیڈ اووروں میں کمال دکھانے میں مسلسل ناکام رہے ہیں۔بنگلہ دیش اپنے پچھلے پانچ ایک روزہ مقابلوں میں سے چار میں جیتی ہے جبکہ اسکاٹ لینڈ صرف ایک میچ جیتنے میں کامیاب رہی ہے ۔اس مقابلے میں بنگلہ دیش کے وکٹ کیپر بلے باز مشفق الرحیم سے ٹیم کو کافی امیدیں وابستہ ہوں گی تو دوسری طرف اسکالیند کے گیندباز جوش ڈیوی بھی سخت محنت کریں گے ۔ ڈیوی اسکاٹ لینڈ کے واحد ایسے گیندباز ہیں جنہوں نے موجودہ عالمی کپ میں اب تک نو وکٹ حاصل کرکے بہترین گیندبازوں میں اپنا نام شمار کرایا ہے ۔تمیم اقبال پر ان کے شائقین کی خاص نظریں ہوں گی کیونکہ وہ اپنے ایک روزہ میچ میں چار ہزار رن سے صرف دس رن دور ہیں اور امید ہے کہ وہ اس میچ میں یہ اعزاز حاصل کرلیں گے ۔ بنگلہ دیش کے کپتان مشرف مرتضی نے میچ سے پہلے کہا تھا کہ وہ اس میچ میں جیت کر کوارٹرفائنل میں جانے کا اپنا راستہ صاف کریں گے ۔ انہوں نے کہا تھا کہ سری لنکا سے شکست کے بعد پوری ٹیم کے اعتماد میں کمی آئی ہے اور آئندہ مقابلے میں وہ اسکاٹ لینڈ کو ہرانے کے لئے اتریں گے تاکہ ٹیم اور کھلاڑیوی کے حوصلے بلند ہوسکیں۔بنگلہ دیش کی ٹیم ۔تمیم اقبال، انعام الحق، سومیا سرکار، محمداللہ، شکیب الحسن ،مشفق الرحیم(وکٹ کیپر) ، شبیر رحمان، مومن الحق، ٹی اسلام، مشرف مرتضی (کپتان)، تسکین احمد، ربیل حسین۔اسکاٹ لینڈ کی ٹیم۔ کائلے کوئتزر،کیلم میک لوئڈ، ہامش گارڈنر، میٹ میکن، پرسٹن مومسن (کپتان)، رچی بورنگٹن ، میتھیو کراس (وکٹ کیپر) ، جوش ڈیوی، ماجد حق، ایلسڈیر ایوانس، ایان وارڈلا۔
 

 

...


Advertisment

Advertisment