Today: Wednesday, November, 21, 2018 Last Update: 02:48 am ET

  • Contact US
  • Contact For Advertisment
  • Tarrif
  • Back Issue

SPORTS NEWS   

زمبابوے کے سامنے سخت چیلنج پیش کرنا چاہے گا پاکستان


سڈنی،28 فروری (یو این آئی) عالمی کپ میں اپنے ابتدائی دو میچ ہار کر سخت تنقید کا سامنا کرنے والی پاکستانی ٹیم کا اگلا مقابلہ اتوار کو زمبابوے سے ہوگا جہاں وہ سخت چیلنج پیش کرنا چاہے گی۔1992 ورلڈ کپ چیمپئن پاکستان عالمی کپ میں زمبابوے کے خلاف کھیلے گئے گزشتہ پانچ مقابلوں میں سے ایک بھی میچ نہیں ہارا ہے ۔وہیں زمبابوے اس عالمی کپ میں اس کے گزشتہ تین مقابلوں میں سے صرف ایک ہی جیت سکا ہے ۔اگرچہ پاکستان کی ٹیم اس بار مضبوط نہیں مانی جا رہی ہے لیکن زمبابوے کے خلاف گزشتہ 47 ون ڈے مقابلوں میں وہ 42 میچوں میں جیت کا پرچم لہرا چکی ہے اور امید ظاہر کی جا رہی ہے کہ وہ اپنی تاریخ جاری رکھنا چاہے گی اور زمبابوے کے خلاف جیت درج کرکے اپنے ناقدین کو کرارا جواب دے گی۔پاکستان کے لیے راحت کی بات یہ ہے کہ اس کے اوپنر احمد شہزاد اس میچ میں واپسی کریں گے ۔ پاکستان گزشتہ کچھ عرصے سے اپنے کھلاڑیوں کی چوٹ کا شکار رہی ہے اور اس کا سیدھا اثر اس کارکردگی میں صاف دیکھا جا سکتا ہے ۔پاکستان عالمی کپ میں ہندستان کے خلاف کھیلا گیا اپنا ابتدائی مقابلہ 76 رنز سے ہار گیا تھا۔وہیں زمبابوے کو بھی جنوبی افریقہ سے عالمی کپ کے اس کے پہلے میچ میں 62 رنز سے شکست کا سامنا کرنا پڑا تھا۔پاکستانی ٹیم کے لیے راحت کی بات یہ ہے کہ اس کے اوپنر احمد شہزاد زمبابوے کے خلاف میچ میں کھیلیں گے ۔شہزاد کو جمعرات کو پریکٹس کے دوران ٹخنے میں چوٹ کی شکایت ہوئی تھی لیکن سنیچر کی صبح کرائے گئے ٹیسٹ کے بعد ان کے فیزیو نے انہیں کھیلنے کی اجازت دے دی ہے ۔ پاکستان کے کچھ کھلاڑی پہلے ہی چوٹ پر قابو پانے میں لگے ہیں جس کا سیدھا اثر ٹیم کی کارکردگی پر پڑ رہا ہے ۔عالمی کپ میں پاکستان کا زمبابوے سے سابقہ ون ڈے مقابلہ 2011 میں پلیکیل میں ہوا تھا جس میں پاکستان نے سات وکٹ سے شاندار جیت درج کی تھی۔اس کے علاوہ 2007 میں کنگسٹن میں زمبابوے کے خلاف کھیلے گئے عالمی کپ میچ میں بھی پاکستان نے ڈک ورتھ لوئس ضابطے سے 93 رنز سے میچ جیت لیا تھا۔دونوں ٹیمیں آخری بار 31 اگست 2013 میں ہرارے میں کھیلیں تھیں جس میں پاکستان نے شاندار کھیل کا مظاہرہ کیا تھا اور میچ 108 رنز سے جیت لیا تھا۔اگرچہ زمبابوے نے 27اگست 2013 کو ہرارے کے میدان پر ہی کھیلے گئے ون ڈے میچ میں پاکستان کو سات وکٹ سے ہرا دیا تھا جو پاکستان کے خلاف گزشتہ پانچ مقابلوں میں زمبابوے کی پہلی اور آخری فتح تھی۔دونوں ٹیموں کا اب تک 47 بار ون ڈے مقابلوں میں آمنا سامنا ہوا ہے جس میں زمبابوے محض تین میچ ہی جیت سکا ہے وہیں پاکستان نے 42میچوں میں جیت کا پرچم لہرایا ہے جبکہ دو مقابلے بے نتیجہ رہے ہیں۔ زمبابوے اس بار عالمی کپ میں اپنا پہلا مقابلہ جنوبی افریقہ سے 62 رنز سے ہار گئی تھی لیکن ٹیم نے اگلے میچ میں واپسی کی اور نیلسن میدان پر متحدہ عرب امارات کو شکست دی۔1992 ورلڈ کپ فاتح پاکستان اس بار مضبوط ٹیم نہیں مانی جا رہی ہے اور مسلسل دو میچ ہارنے کے بعد سخت تنقید کا سامنا کر رہی ہے ۔ٹیم کے کپتان مصباح الحق نے پہلے ہی اپنے ساتھی کھلاڑیوں کو اعتماد سے کھیلنے کا مشورہ دیا تھا۔پاکستان ہر حال میں اس میچ کو جیت کر اپنے ناقدین کو کرارا جواب دینے کی کوشش کرے گا جبکہ زمبابوے بھی اس مقابلے میں جی جان لگا کر تاریخ کو تبدیل کرنے کا بھرپور کوشش کرے گا۔اس میدان پر کھیلا گیا آخری مقابلہ آئرلینڈ اور متحدہ عرب امارات کے درمیان ہوا تھا جس میں آئرلینڈ نے مخالف ٹیم کو دو وکٹ سے شکست دی تھی۔پاکستان کی ٹیم ایک بار عالمی کپ اپنے نام کر چکی ہے لیکن زمبابوے ایک بار بھی سیمی فائنل تک پہنچنے میں کامیاب نہیں ہو سکی ہے ۔پاکستان نے اس عالمی کپ میں دو میچ کھیلے ہیں اور وہ دونوں میچ ہار کر پول بی کی پوائنٹ ٹیبل میں سب سے نچلے نمبر پر ہے ۔وہیں زمبابوے تین میچوں میں ایک میں جیت درج کرکے اس سے دو قدم اوپر ہے ۔اگر پاکستان یہ میچ نہیں جیت پا تا ہے تو اس کے لیے کوارٹرفائنل میں جگہ بنانا بہت مشکل ہو جائے گا وہیں اگر زمبابوے یہ میچ ہار جاتا ہے تو اس کے لیے اگلے میچ میں واپسی کرنا بہت ضروری ہو گا۔اگرچہ دونوں ہی ٹیم اس وقت عالمی کپ میں اپنے خراب کارکردگی کی وجہ سے دباؤ میں نظر آ رہی ہیں اور ان کھلاڑیوں کو واپسی کیلئے اعتماد سے کھیلنے کی ضرورت ہو گی۔
 

 

...


Advertisment

Advertisment