Today: Thursday, November, 22, 2018 Last Update: 01:49 am ET

  • Contact US
  • Contact For Advertisment
  • Tarrif
  • Back Issue

SPORTS NEWS   

گیل کی طوفانی ڈبل سنچری میں اڑگیا زمبابوے

 

کرس گیل کی 215اور سیموئلز 133کے ساتھ 372رنوں کی ریکارڈ شراکت کی بدولت زمبابوے کو دی 73رن سے شکست
کینبرا ،24 فروری (یو این آئی) جارحانہ بلے باز کرس گیل (215)کی ریکارڈ ڈبل سنچری اور ان کی مارلون سیمؤیلز(ناٹ آؤٹ 133) کے ساتھ 372رن کی عالمی کپ ریکارڈ شراکت کی بدولت ویسٹ انڈیز نے زمبابوے کو منگل کو ڈک ورتھ لیوس ضابطے کی بنیاد پر 73رنزسے شکست دے کر ورلڈ کپ کے پول بی میں اپنی دوسری جیت درج کر لی۔ویسٹ انڈیز کے کپتان جیسن ہولڈر نے اس میچ سے پہلے کہا تھا کہ گیل کا بلا خاموش نہیں پڑا ہے اور وہ دھماکے کرنے کے لئے تیار ہیں۔اس کے اگلے ہی دن گیل نے ایسا دھماکہ کیا کہ دنیاحیران رہ گئی اور کئی ریکارڈ ایک کے بعد ایک تباہ ہوتے چلے گئے ۔گیل نے اپنی شاندار اننگ میں 147گیندوں میں 10چوکے اور 16چھکے اڑا کر 215رنز بنائے جبکہ مارلون سیمؤیلز نے 156 گیندوں میں 11 چوکے اور تین چھکے لگا کر ناٹ آؤٹ 133 رنز بنائے ۔ان دونوں کے درمیان دوسرے وکٹ کے لیے 49.4 اوور میں رن کی عالمی ریکارڈشراکت سے ویسٹ انڈیز نے مقررہ 50 اوور میں دو وکٹ پر 372 رنزکا بہت بڑا اسکور بنا دیا۔ زمبابوے کو بارش کی وجہ سے 48 اوور میں 363 رنز بنانے کانظر ثانی ہدف ملا۔زمبابوے نے حالانکہ سخت جدوجہد کی اورٹیم 44.3 اوور میں 289 رن بنا کردل جیتنے میں کامیاب رہی۔ زمبابوے کی جانب سے سین ولیمز (76)اور کریگ ارون (52)نے شاندار نصف سنچری بنائی۔لیکن ویسٹ انڈیز کا پہاڑ جیسا اسکور زمبابوے پر بھاری پڑ گیا۔گیل نے ڈبل سنچری کے بعد اپنی آف اسپن گیندوں کا جادوبکھیرتے ہوئے پانچ اوور میں 35 رن پر دو وکٹ اور اپنے میچ فاتح کارکردگی سے مین آف دی میچ بھی بن گئے ۔جیروم ٹیلر نے 38 رنزپر تین وکٹ اور کپتان ہولڈر نے 48 رن پر تین وکٹ حاصل کئے ۔نکتا ملر اور مارلون سیمؤیلز کو ایک ایک وکٹ ملی۔ویسٹ انڈیز نے پول بی مقابلے میں ٹاس جیت کر پہلے بلے بازی کرنے کا فیصلہ کیا اور گیل نے رنز کی برسات کرتے ہوئے 50 اوورزمیں دو وکٹ پر ٹیم کے اسکور کو 372 پر پہنچا دیا۔اس ورلڈ کپ میں ابھی تک کسی ٹیم کا یہ سب سے بڑا اسکور بھی ہے ۔گیل ورلڈ کپ کی تاریخ میں ڈبل سنچری بنانے والے پہلے بلے باز بن گئے ہیں۔اس کے علاوہ ون ڈے میں یہ ان کا سب سے بہترین مظاہرہ ہے ۔گیل کا مظاہرہ ہر لحاظ میں غیر معمولی ہے اور انہوں نے اپنی اس اننگز میں کئی ریکارڈ بھی منہدم کر دیے ۔ انہوں نے تقریبا ہر کونے میں چھکے اڑایئے ۔ گیل نے اپنے 50 رن51گیندوں میں ،100رنز105 گیندوں میں اور 200رنز 138گیندوں میں پورے کیے ۔سیمؤیلز نے 143گیندوں میں اپنے 100 رنز پورے کئے ۔گیل کی یہ 22ویں اور سیمؤیلز کی آٹھویں سنچری ہے ۔دونوں بلے بازوں نے دوسرے وکٹ کے لیے 372 رنز کی شراکت کی جو نہ صرف عالمی کپ بلکہ ون ڈے تاریخ کی سب سے بڑی شراکت ہے ۔اس سے پہلے ورلڈ کپ میں ہندستانی کرکٹروں راہل دراوڑاور سورو گنگولی نے 26 مئی 1999کو عالمی کپ کے دوران سری لنکاکے خلاف 318رن کی شراکت کی تھی۔ون ڈے کی سب سے بڑی شراکت کا ریکارڈ اس سے پہلے دراوڑ اور سچن کے نام تھا جنہوں نے نومبر 1999میں حیدرآباد میں نیوزی لینڈ کے خلاف 331رن جوڑے تھے ۔گیل ون ڈے میں ڈبل سنچری بنانے والے چوتھے بلے باز اور ون ڈے میں سب سے زیادہ انفرادی اسکور بنانے والے تیسرے کھلاڑی بن گئے ہیں۔اس معاملے میں ہندوستان کے روہت شرما264رنز کے ساتھ پہلے اور وریندر سہواگ(219 رنز)دوسرے نمبر پر ہیں ۔ ڈبل سنچری لگانے والے وہ پہلے غیر ہندوستانی کھلاڑی بن گئے ہیں۔گیل کے ون ڈے کیریئر کی یہ 22 ویں سنچری ہے اور اس کے ساتھ ہی انہوں نے 263 میچوں میں 9000 رنز پورے کر لیے ہیں۔گزشتہ کافی وقت سے فارم کو لے کر تنقید کا شکار بنے گیل نے اپنے کیریئر کاسب سے بڑا اسکور بنانے کے ساتھ ہی انہوں نے گزشتہ دو برسوں سے چل رہی خراب فارم کو بھی پیچھے چھوڑ دیا۔گیل نے سال 2013 کے بعد سب سے بڑی 215 رن کی اننگ کھیلی۔انہوں نے آخری بار 28جون 2013کوسنچری لگائی تھی۔ گیل نے سری لنکا کے خلاف 109رنز کی اننگز کھیلی تھی۔35سالہ کیریبین بلے باز نے138 گیندوں میں ون ڈے میں سب سے تیزڈبل سنچری لگائی اور اس معاملے میں انہوں نے ہندوستانی بلے باز وریندرسہواگ کے ریکارڈ کو توڑا جنہوں نے 140گیندوں میں اپنی ڈبل سنچری مکمل کی تھی۔ گیل نے 138 گیندوں میں اپنے 200رن پورے کئے جس میں نو چوکے اور 16چھکے شامل تھے ۔میچ میں تقریبا ہر کونے میں چھکے اور چوکے لگا کر حریف ٹیم زمبابوے کے گیند بازوں کی پٹائی کر چکے گیل کا وکٹ آخر کار اننگز کی آخری گیند پر گرا اور ہیملٹن مسکادزا نے ایلٹن چگمبرا کے ہاتھوں گیل کو آؤٹ کیا ان کی ڈبل سنچری کی یادگار اننگز کو ناٹ آؤٹ رہنے سے محروم کیا۔مسکادزا نے6.2 اوورمیں 39رن پر ایک وکٹ لیا۔سیمؤیلز نے آخری تین اوورز میں گیل کو زیادہ اسٹرائیک نہیں لینے دی ورنہ گیل تیز ترین چھکے اورسب سے زیادہ اسکور کا ریکارڈ اپنے نام کر سکتے تھے ۔ویسٹ انڈیز نے اپنا وکٹ اوپنر ڈیون اسمتھ کے طور پر صفر پرگنوایا تھا۔لیکن اس کے بعد گیل اور سیمؤیلز نے اکیلے دم پرون ڈے کی سب سے زیادہ شراکت کر کے اسکور کو 372پر پہنچا دیا۔گیل اور سیمؤیلز دونوں نے ہی اپنا بہترین ون ڈے مظاہرہ کیا۔اس سے پہلے گیل کا ون ڈے میں سب سے بہترین اسکور ناٹ آؤٹ 153اور سیمؤیلز کاناٹ آؤٹ 126رنز تھا۔ویسٹ انڈیز نے آخری 10اوورز میں 152رن بٹورے ۔تناشے پنیگارا نے نو اوورز میں 82رنز لٹاکر ایک وکٹ لیا۔تیندي چتارا نے 9.4اوور میں 74 رنز لٹائے ۔انہیں کمر سے زیادہ اونچائی کی مسلسل دو گیند ڈالنے کے بعد اٹیک سے ہٹا دیا گیا۔ان اوورکی باقی دو گیند مسکادزا نے ڈالیں۔
 

 

...


Advertisment

Advertisment