Today: Sunday, September, 23, 2018 Last Update: 05:46 pm ET

  • Contact US
  • Contact For Advertisment
  • Tarrif
  • Back Issue

SPORTS NEWS   

طلائی تمغوں کی ہیٹ ٹرک پر ہے یوگیشور کی نظر

 

نئی دہلی13اکتوبر(آئی این ایس انڈیا) ایشیائی کھیلوں میں 28سال بعد طلائی تمغہ جیتنے والے پہلے ہندوستانی پہلوان یوگیشور دت خود پر سے ایک بڑا دباؤ ختم کرنے کے بعد اب ریو اولمپکس تک طلائی تمغوں کی ہیٹ ٹرک پوری کرنے کے مقصد کے ساتھ پریکٹس کر رہے ہیں۔یوگیشور نے انچیون ایشیائی کھیلوں کے 65کلوگرام ویٹ کلاس میں طلائی تمغہ جیتا جو 1986کے بعد کسی ہندوستانی پہلوان کا ان براعظم کھیلوں میں پہلا سونے کا تمغہ ہے۔ان سے پہلے سول ایشیائی کھیلوں میں کرتار سنگھ نے طلائی تمغہ جیتا تھا۔ان کا مقصد اب اگلے سال ورلڈ چمپئن شپ میں سونے کا تمغہ جیت کر اولمپکس کیلئے کوالیفائی کرنا اور پھر ریو میں بھی سونے کا تمغہ جیتنا ہے۔لندن اولمپکس میں کانسے کا تمغہ جیتنے والے یوگیشور نے آج کہا کہ میں اب صرف ریو اولمپکس کے لئے ہی پریکٹس کر رہا ہوں۔مجھے اگلے سال ورلڈ چیمپئن شپ میں حصہ لینا ہے اور میں وہاں طلائی تمغہ جیتنے کی کوشش کروں گا اس کے بعد ریو اولمپکس میں بھی میں اپنے تمغہ کا رنگ تبدیل کرنے کی کوشش کروں گا۔انہوں نے کہا کہ میں نے ان تین طلائی تمغوں کو اپنا ہدف بنایا تھا اس میں میں اپنے پہلے ہدف میں کامیاب رہا ہوں اب میں اپنی کمزوریوں کو دور کرنے پر توجہ دے رہا ہوں۔میری دونوں پنڈلیوں میں مسئلہ تھا اورمیں نہیں چاہتا کہ وہ مجھے آگے پریشان کریں ۔انچیون سے پہلے گلاسگو دولت مشترکہ کھیلوں میں بھی طلائی تمغہ جیتنے والے یوگیشور نے تسلیم کیا کہ اولمپک میں دو بار تمغہ جیتنے والے سوشیل کمار کی غیر موجودگی کی وجہ سے ایشیائی کھیلوں میں ان پر کافی دباؤ تھا۔انہوں نے کہا کہ میں نے اچھی محنت کی تھی اور اس وجہ سے مجھے یقین تھا لیکن سشیل کی غیر موجودگی کی وجہ سے مجھ سے کافی توقعات تھیں اور اس لئے مجھ پر دباؤ بھی تھا۔ہم نے 1986کے بعد سونے کا تمغہ نہیں جیتا تھا یہ بات بھی ذہن میں تھی لیکن ان سب چیزوں نے میرے لئے مثبت کام کیا۔ اس ا سٹار پہلوان نے اس کے ساتھ ہی کہا آگے کبھی ایسی نوبت نہیں آنی چاہئے جب ایشیائی کھیلوں میں ہندوستانی پہلوانوں کو طلائی تمغہ کے لئے 28سال کا انتظار کرنا پڑے۔یوگیشور نے کہا کہ ہمارے پاس اچھے نوجوان پہلوان ہیں۔میں چاہتا ہوں کہ اب ہر ایشیائی کھیل میں ہندوستان کم سے کم ایک طلائی تمغہ ضرور جیتے۔ہمیں ابھی سے ایسی کوشش کرنی چاہیے کہ مستقبل میں ہمیں اتنا لمبا انتظار نہیں کرنا پڑے۔

...


Advertisment

Advertisment