Today: Thursday, November, 15, 2018 Last Update: 03:47 am ET

  • Contact US
  • Contact For Advertisment
  • Tarrif
  • Back Issue

SPORTS NEWS   

جارحیت میں عزت کی سرحد نہ عبور کر یں کھلاڑی: لیمن

 

روہت کے ساتھ بحث کے لئے وارنر پر جرمانہ

میلبورن19جنوری(آئی این ایس انڈیا)آسٹریلیا کے کرکٹ کوچ ڈیرین لیمن نے آج اپنے کھلاڑیوں کو خبردار کیا کہ میدانی جارحیت کا مظاہرہ کرتے ہوئے وہ عزت کی خلاف ورزی نہ کریں۔سہ رخی سیریز کے کل کے میچ میں ڈیوڈ وارنر اور روہت شرما کے درمیان بحث ہو گئی تھی۔لیمن نے کہا کہ وہ نہیں چاہتے کہ حالات بے قابو ہوں۔انہوں نے کہا کہ یہ دیکھنے میں اچھا نہیں لگتا،آئی سی سی نے اس کے بارے میں کچھ کیا ہے،ہمیں ایسے حالات کا بہتر طریقے سے سامنا کرنا ہو گا،ڈیوڈ پر 50فیصد جرمانہ عائد کیا گیا ہے،اب ہمیں اسے بھلا کر آگے دیکھنا ہے۔لیمن نے کہا کہ یہ مثالی حیثیت نہیں ہے لیکن ہمیں اس بات کا یقین کرنا ہوگا کہ ہم حد پار نہ کریں۔ انہوں نے کہا کہ ڈیوڈ جارحانہ کرکٹر ہیں اور ہم ان کی حمایت کرتے ہیں۔یہ یقینی بنانا ہوگا کہ وہ میدان پر صحیح چیزیں کریں اور یہ وہی بخوبی طے کر سکتا ہے،ہم اس کی مدد کریں گے۔انہوں نے کہا کہ مخالف کھلاڑیوں کو پریشان کرنا کوئی مسئلہ نہیں ہے لیکن کھلاڑیوں کو کھیل کا احترام کرنا کبھی نہیں بھولنا چاہئے۔لیمن نے کہا کہ ہمیں کرکٹ کو نہیں بھولنا چاہیے جو دنیا بھر میں لوگوں کیلئے تفریح کا ذریعہ ہے،ہمیں یہ طے کرنا ہوگا کہ جارحیت دکھائیں لیکن حد کے اندر رہے۔
دوسری جانب ہندوستان کے خلاف سہ رخی ون ڈے کرکٹ سیریز کے دوران روہت شرما سے تیکھی بحث کی وجہ سے آسٹریلیا کے اوپنر ڈیوڈ وارنر پر میچ فیس کا 50فیصد جرمانہ عائد کیا گیا ہے لیکن انہوں نے اپنا دفاع کرتے ہوئے کہا کہ وہ ہندوستانی بلے باز کو انگریزی بولنے کیلئے کہہ رہے تھے۔وارنر نے ایک ریڈیو انٹرویو میں بتایا کہ کل کے میچ کے بعد ان پر جرمانہ عائد کیا گیا ہے۔انہوں نے کہا کہ بحث میں پڑنا صحیح نہیں تھا لیکن انہوں نے کہا کہ روہت کو انگریزی میں بولنے کیلئے کہہ کر انہوں نے کوئی غلطی نہیں کی۔ان کے درمیان بحث ہندوستانی اننگز کے 23ویں اوور کے آخری میں ہوئی جب روہت اوورتھرو پر ایک رن کے لئے دوڑے تھے۔وارنر نے کہا کہ جب کیپر کی جانب گیند پھینکی جاتی ہے اور وہ کسی کھلاڑی کو لگتی ہے تو آپ رن نہیں بھاگتے۔ لڑکوں نے اس سے کچھ کہا اور جب میں کچھ کہنے گیا تو اس نے اپنی زبان میں کچھ کہا تو میں نے کہا کہ انگریزی میں بولو تاکہ میں سمجھ سکوں۔انہوں نے کہا کہ میں نے کوئی غلطی نہیں کی،اس نے انگریزی میں بولا جو میں بتا نہیں سکتا کہ کیا تھا،اگر وہ ہندی بولتا رہا تو میں اسے بار بار انگریزی میں بولنے کیلئے کہوں گا۔آئی سی سی نے کل اس بحث کیلئے مجھ پر جرمانہ لگایا۔وارنر نے کہا کہ روہت کو ایک رن نہیں بھاگنا چاہیے تھا کیونکہ گیند اس کے پاؤں سے ٹکراکر گئی تھی۔انہوں نے کہا کہ وکٹ کیپر نے کہا کہ گیند اس لگی ہے،مجھے بھی ایسا لگا لہذا میں اس کی طرف گیا،وہ مجھ سے کچھ کہہ رہا تھا تو میں نے اسے انگریزی میں بولنے کے لئے کہا۔وارنر نے کہا کہ مجھے ایک کھلاڑی سے بحث کیلئے جرمانہ جھیلنا پڑا کیونکہ آپ میچ کے دوران کسی کھلاڑی سے اس طرح بحث نہیں کر سکتے۔یہ اوورز کے درمیان میں ہوا تھا جس وقت مجھے اپنی فیلڈنگ پوزیشن پر رہنا چاہئے تھا۔آسٹریلوی ٹیم نے سست گیند بازی بھی کی جس سے اننگز کے درمیان میں وقفہ چھوٹا کرنا پڑا۔وارنر نے کہا کہ کپتان جارج بیلی پر ایک میچ کی پابندی سے کوچ کافی مایوس ہیں،کپتان کو معطل نہیں کیا جانا چاہیے کیوں کہ یہ ہماری غلطی تھی۔
 

 

...


Advertisment

Advertisment