Today: Thursday, November, 15, 2018 Last Update: 03:29 am ET

  • Contact US
  • Contact For Advertisment
  • Tarrif
  • Back Issue

LATEST NEWS   

وادی کشمیر میں شدید سردی جاری

 

موسم کی سرد ترین رات ریکارڈ، مشہور ڈل جھیل منجمد
سری نگر، 27 دسمبر (یو این آئی) وادی کشمیر اور لداخ خطے میں شدید سردی جاری ہے۔ سردی کے سبب دنیا بھر میں مشہور ڈل جھیل سمیت کئی آبی ذخائر برف میں تبدیل ہو گئے ہیں۔لداخ خطے کے لیہہ کا درجہ حرارت صفر سے 164 ڈگری سیلسئس منفی اور کارگل کا صفر سے 145 ڈگری سیلسئس منفی رہا۔ سردی کے سبب ڈاکٹروں نے معمر لوگوں کو صبح اور شام کے وقت گھر سے نکلنے سے منع کیا ہے۔سری نگر میں واقع ڈل جھیل کا بیشتر حصہ سردی کے سبب مکمل طور پر جم گیا ہے۔ سری نگر کا درجہ حرارت صفر سے 56 ڈگری سیلسئس منفی درج کیا گیا ہے۔ جموں وکشمیر کی موسم گرما کی دارالحکومت سری نگر میں جمعہ اور سنیچر کی درمیانی رات سیزن کی سرد ترین رات درج کی گئی اں کم سے کم6 درجہ حرارت منفی 56 ڈگری سیلسیس ریکارڈ کیا گیا۔ محکمہ موسمیات کے مطابق رات کے اوقات میں مطلع صاف رہنے کے باعث کم سے کم درجہ حرارت میں کمی آرہی ہے۔ سری نگر میں واقع ڈل جھیل کا بیشتر حصہ سردی کے سبب مکمل طور پر جم گیا ہیجبکہ پینے کے پانی کی لائنیں اور نل بھی جم گئے تھے جس کے نتیجے میں متعدد علاقوں میں پانی کی سپلائی متاثر رہی۔ سری نگر کی طرح وادی کشمیر کے دوسرے حصوں میں بھی سخت سردی پڑرہی ہے۔ محکمہ موسمیات کے مطابق شہرہ آفاق سیاحتی مقامات گلمرگ اور پہلگام میں کم سے کم درجہ حرارت بالترتیب منفی 47 اور 74 ریکارڈ کیا گیا۔ دوسری جانب خطہ لداخ میں لوگوں کو منجمد کرنے والی سردی سے کوئی راحت مل نہیں رہی ہے۔ جہاں گذشتہ رات لیہہ میں کم سے کم درجہ حرارت منفی 164 وہیں کرگل میں کم سے کم درجہ حرارت منفی 145 ڈگری سیلسیس ریکارڈ کیا گیا۔ اس دوران محکمہ موسمیات کے ایک ترجمان نے بتایا کہ جموں وکشمیر میں اگلے چوبیس گھنٹوں کے دوران موسم خشک رہے گا جس کے نتیجے میں کم سے کم درجہ حرارت میں مزید کمی آسکتی ہے۔

 

 

...


Advertisment

Advertisment