Today: Monday, September, 24, 2018 Last Update: 10:26 pm ET

  • Contact US
  • Contact For Advertisment
  • Tarrif
  • Back Issue

LATEST NEWS   

ہاشم انصاری کیلئے رحمت بننے کو جماعت اسلامی تیار


علاج کیلئے خرچ اٹھانے کا قیم جماعت نے دیا اشارہ ، میڈیا کو غلط رپورٹنگ نہ کرنے اور جمہوریت کے تحفظ کیلئے آواز بلند کرنے کی اپیل ، بی جے پی پہلے اپنی آیڈیولوجی بدلے تبھی بات چیت ممکن، آنکھ بند کرکے سیکولر جماعتوں کی حمایت نہ کرنے کا اعلان :قیم جماعت
محمد احمد

نئی دہلی،6دسمبر(ایس ٹی بیورو)جماعت اسلامی ہند نے آج اس بات کا اعلان کیا ہے کہ اگر ضرورت پڑی تو وہ ہاشم انصاری کی مدد سے دور نہیں رہے گی ۔ قیم جماعت نصرت علی نے آج جماعت کے صدر دفتر ابوالفضل میں منعقدہ پر یس کانفرنس کو خطاب کرتے ہوئے اس بات کااعلان کیا کہ ’جماعت ہاشم انصاری کے حالات جاننے کیلئے کوشاں ہے ۔انہوں نے اس بات کا اعادہ کیا کہ ضرورت پڑنے پر ہاشم انصاری ہی نہیں بلکہ جن لوگوں کے بارے میں ہمیں میڈیا یا دیگر ذرائع سے مدد کرنے کیلئے اطلاعات ملیں گی ان تک ہم ضرور پہونچیں گے اور جانچ پڑتال کے بعد ہم ان کی ضرور مدد کریں گے ۔انہوں نے نامہ نگاروں کے سوالوں کا جواب دیتے ہوئے کہا کہ اگر بی جے پی دوستی کے ہاتھ بڑھائے تو ہم اس پر ضرور غور کریں گے ، لیکن سوال بی جے پی کی آڈیولوجی کا ہے ۔ وزیراعظم کچھ کہتے ہیں اور ان کے وزراء سمیت ممبران پارلیمنٹ اور پارٹی بہ شمول پارٹی صدر امت شاہ زہر اگل رہے ہیں اور پی ایم اس پر ’مون برتھ‘ رکھے ہوئے ہیں ، جوکہ جمہوریت کیلئے بدنما داغ ہے ۔انہوں نے بی جے پی اور اس کی ذیلی تنظیموں کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ انکی آڈیولوجی کی سبب ہی مسلمان ان سے قریب نہیں گئے ۔ تاہم انہوں نے واضح کیا کہ وہ کسی بھی سیکولر پارٹی کی آنکھ بند کرکے حمایت نہیں کریں گے ۔ ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ ’ جنتاپریوار میں انضمام ‘ اچھی خبر ہے ، لیکن لالو اور ملائم کیساتھ سابقہ تجربات بے حد تلخ ہیں اس لئے اس پر کچھ کہنا جلد بازی ہوگی ۔ بابری مسجد قضیہ کے بارے میں اور نئی حکومت کے آنے پر پیدا ہوئے اندیشوں کے بارے میں پوچھے گئے سوال کے جواب میں جماعت کے ذمہ دار نے بتایا کہ ابھی چونکہ مقدمہ عدالت عظمیٰ میں زیر غور ہے ہمیں یقین ہے کہ فیصلہ ہمارے حق میں ہو گا۔ مسلمانوں کے پاس اسکے مضبوط ثبوت ہیں ،جو انکے حق میں فیصلے کیلئے معاون ہوں گے ۔جماعت کے جنرل سکریٹری نے اس بات پر سخت افسوس کا اظہار کیا کہ لبراہن کمیشن کی رپورٹ جوکہ 2009 میں مسجد کی شہادت کے 18 سالوں کے بعد آئی مگر اسکے آنے کے بعد بھی ابھی تک اس پر کو ئی کاروائی نہیں ہوئی ۔بریلی کی کورٹ میں بھی جو مقدمہ چل رہا ہے وہ انتہائی سست رفتاری کیساتھ چل رہا ہے جو کہ اچھی بات نہیں ہے ۔ پریس کانفرنس کو جماعت کے شعبہ میڈیا کے ذمہ دار اعجاز اسلم اور رابطہ عامہ کے سکریٹری سلیم انجینئر نے بھی خطاب کیا ۔

 

 

...


Advertisment

Advertisment