Today: Monday, September, 24, 2018 Last Update: 12:44 pm ET

  • Contact US
  • Contact For Advertisment
  • Tarrif
  • Back Issue

LATEST NEWS   

دہلی میں ہمارا وزیر اعلیٰ بنے گا:مختارعباس نقوی

 

عوام کو منجھدار میں چھوڑ کر نہیں’بھاگے گا‘بی جے پی کاوزیر اعلیٰ :اروندکجریوال پرطنز،عوامی مینڈیٹ ملنے کادعویٰ

نئی دہلی ،6نومبر(آئی این ایس انڈیا )دہلی اسمبلی کے آئندہ انتخابات میں بی جے پی کو مینڈیٹ ملنے کا دعوی کرتے ہوئے پارٹی نے آج کہا کہ قومی راجدھانی میں اس کا وزیر اعلی بنے گا جو یقینی طور پر حکومت اور عوام کو’منجھدھار میں چھوڑ کر نہیں بھاگے گا۔‘بی جے پی نائب صدر مختار عباس نقوی نے کہا،عوام کے سامنے نریندر مودی کی قیادت والی مرکزی حکومت کا کام ہے،دہلی میں جب بھی انتخابات ہوں گے، ہمیں عوام کی مکمل حمایت ملے گی۔دہلی میں بی جے پی کی حکومت بنے گی، ہمارا وزیراعلیٰ ہو گا،لیکن یقینی طور پر وہ حکومت اور عوام کو ’منجھدھار میں چھوڑ کر نہیں بھاگے گا،بلکہ ایمانداری سے عوام کے لئے کام کرے گا۔‘ نقوی سے آپ لیڈر اروند کیجریوال کے خبروں میں آئے اس تبصرے کے بارے میں پوچھا گیا تھا جس میں انہوں نے کہا تھا کہ دہلی میں نریندر مودی الیکشن نہیں لڑ رہے ہیں بلکہ یہ وزیر اعلی کے عہدے کے لئے انتخابات ہوگا جس میں بی جے پی کوئی چہرہ نہیں پیش کر رہی ہے،کیجریوال نے اپنی جانب سے بی جے پی لیڈر جگدیش مکھی کا نام اپنے مقابل کے طور پر آگے بڑھایا تھا۔بی جے پی لیڈر نے کہا، کیجریوال اپنی پارٹی کی فکر چھوڑ کر یہ دیکھنے میں مصروف ہیں کہ دوسری پارٹی میں کون لیڈر بنے گا،وہ اعلیٰ آئینی ادارہ بن گئے ہے جس پر کوئی تبصرہ کرنا مناسب نہیں ہے۔‘دلی میں کانگریس کی طرف سے انتخابی مہم میں سجن کمار، جگدیش ٹائٹلر کو شامل کرنے کی خبروں کے بارے میں پوچھے جانے پر نقوی نے کہا کہ کانگریس جسے چاہے اسے شامل کرے لیکن 1984کے فسادات کے زخم اب بھی ہرے ہیں،ایسے واقعات سے لوگوں میں تشویش پیدا ہوتی ہے۔مغربی بنگال کی سیاسی صورتحال کا ذکر کرتے ہوئے نقوی نے کہا کہ ریاست ’دہشت گردوں اور شرارت پسند عناصر کا آشیانہ‘ بن گئی ہے،ایک کے بعد ایک واقعات پیش آرہے ہیں اور حکومت ایسے واقعات میں ملوث افراد کے خلاف کارروائی کرنے کی بجائے انہیں تحفظ دیتی نظر آرہی ہے۔انہوں نے الزام لگایا کہ مغربی بنگال میں آج دہشت گردانہ واقعات سے وابستہ لوگوں کے ٹھکانے بنے ہوئے ہیں اور وہ بغیر کسی خوف کے واقعات کو انجام دے رہے ہیں۔واضح رہے کہ گزشتہ ہفتے نقوی کی قیادت میں بی جے پی کا ایک وفد مغربی بنگال کے بیربھوم ضلع کے مکھرا گاؤں میں وہاں کے حالات کا جائزہ لینے گیا تھا جہاں حال ہی میں مسلح افراد کے حملے میں تین افراد ہلاک ہو گئے تھے،پولیس نے تاہم وفد کو وہاں جانے سے روک دیا تھا۔مہاراشٹر میں شیوسینا کے ساتھ اتحاد کو حتمی شکل دیئے جانے سے متعلق ایک سوال پر بی جے پی لیڈر نے کہا کہ اس میں کوئی تعطل نہیں ہے،مہاراشٹر میں ہماری حکومت چل رہی ہے،وزیر اعلی تمام معاملات کو دیکھ رہے ہیں۔

 

...


Advertisment

Advertisment