Today: Wednesday, November, 21, 2018 Last Update: 05:59 pm ET

  • Contact US
  • Contact For Advertisment
  • Tarrif
  • Back Issue

LATEST NEWS   

طلباء اسلاف کی زندگی کو اسوہ بناکر باطل قوتوں کا سامنا کریں

 

عدلیہ اور قانون پر مکمل یقین ،عدلیہ کے انصاف کی وجہ سے آپکے درمیان موجودہوں:گجرات بم دھماکوں کے ملزمین کو پناہ دینے کے الزام میں گرفتارکئے کئے معروف عالم دین مولانا شاہ عبد القوی کا جمعیۃ علماء ہند یونٹ دیوبند کی جانب سے دی گئی اعزازی تقریب میں اظہار خیال

یاسر عثمانی

دیوبند،31؍ اکتوبر( ایس ٹی بیور و) معروف عالم دین و رابطہ مدارس دارالعلوم دیوبند کے صوبہ آندھرا کے صدر مولانا عبد القوی نے کہا کہ عدلیہ اور قانون پر انکا مکمل یقین اور بھروسہ ہے ،عدلیہ کے انصاف کی وجہ سے آپکے درمیان موجودہوں اور شکرگذار ہوں جمعیۃ علماء ہند کا جس کے سبب میری رہائی کی اللہ نے سبیل پیدا کی ہے،طلبہ ا سلاف کی زندگیوں کے نمونہ کو سامنے رکھیں او راسی پر عمل پیرا ں ہوکر تمام باطل قوتوں کی یہ کوشش ہے کہ د نیا کے تمام ایمانی مراکز سے جدید یت کے بہانے روحانیت کو ختم کردیا جائے اس لئے آپ علم کے ساتھ عمل بھی جاری رکھیں اور وقت کی قدر کریں۔گجرات بم دھماکوں کے ملزمین کو پناہ دینے کے الزام میں گرفتارکئے کئے معروف عالم دین مولانا شاہ عبد القوی گزشہ شب یہاں شیخ الہند میں جمعیۃ علماء ہند یونٹ دیوبند کی جانب سے منعقد اعزاز تقریب میں خصوصی خطاب کررہے تھے۔خیال رہے کہ مولاناموصوف پانچ ماہ کی حراست کے بعد ضمانت پر رہا ہوئے ہیں جس کے بعد وہ مغربی اترپردیش کے دورہ پر ہیں جس کے تحت دیوبند پہنچے جہاں طلباء مدارس نے فلک شگاف نعروں کے ساتھ ان کا والہانہ استقبال کیا ۔مولانا عبدالقوی نے علمائے دیوبند کا تذکرہ کرتے ہوئے کہا کہ دیوبند کے علماء گذشتہ ڈیڑھ سوسالوں سے معرکۃالآراء کام کررہے ہیں مدارس اور جمعیۃ کا نظام علمائے دیوبند نے ہی قائم کیا ہے جو آج پوری دنیا کے مسلمانوں کیلئے مشغل راہ اور رشدوہدایت کا مرکزہے ۔انہوں نے کہا کہ دارالعلوم دیوبند بین الاقوامی سطح پر شہرت یافتہ ہونے کے ساتھ اپنی اعتدال پسندی کے لئے معروف ہے یہاں کے علماء کے احسانات پوری دنیا پر ہیں اور اکابرین دیوبند کے قصے سنکر اور پڑھ کرصحابہ کرامؓ کے دورکی یاد تازہ ہوجاتی ہے۔ انہوں نے علماء کرام، طلبہ اور جمعیۃ کے تمام کارکنان کا قید کے زمانے میں انکی رہائی کے لئے دعائیں کرنے کے لئے شکریہ اداکیا ۔بعد ازیں اخباری نمائندوں گفتگو کرتے ہوئے مولانا عبدالقوی نے اپنے اوپر لگائے گئے الزامات کو مسترد کرتے ہوئے کہا کہ تمام الزامات بے بنیاد ہیں اور انہیں اس ملک کے قانون اور عدلیہ پر پورا بھروسہ ہے کہ وہاں سے انہیں انصاف ملے گا۔ انہوں نے کہا کہ وہ ظلم وناانصافی کے خلاف ہیں او ر حید رآباد میں دہشت گردی مخالف پروگرام منعقد کرچکے ہیں ۔انہوں نے بتایا کہ جب انہیں یہ معلوم ہواکہ حیدآباد بم دھماکوں سے متعلق کیس میں درج ایف آئی آر میں انکا نام بھی شامل ہے تووہ سفر حج پر تھے۔ مولانا نے کہا کہ دہشت گردی کا فعل غیر اسلامی ہونے کے علاوہ غیر انسانی بھی ہے ۔مولانا عبدالقوی نے کہا کہ اسلام امن کا پیغام دیتا ہے ہندوستانی مسلمان محب وطن ہے اور اپنے ملک کیلئے ہر قسم کی قربانی دینے کیلئے تیار ہے۔ استقبالیہ پروگرام کے صدر مولانا حسیب صدیقی نے مولانا عبدالقوی کا استقبال کرتے ہوئے جمعیۃ علماء کی تاریخ ہندوستان میں مسلمانوں کی ہر سطح پر جمعیۃ کی جانب سے مدد اور حقوق کی بازیابی کے لئے مسلسل جدوجہد کا تذکرہ کرتے ہوئے علمائے کرام اور اکابرین دیوبند کا تذکرہ کرتے ہوئے کہا کہ علماء دیوبند نے اس ملک کی آزادی اور سلامتی کیلئے جو قربانیاں دی ہیں وہ تاریخ کا ناقابل فراموش باب ہیں۔ قبل ازاں پروگرام کا آغاز تلاوت کلام پاک سے ہوا جسکے بعد کاشف الدین تبریز حیدآبادی نے نعت پاک پیش کی۔ پروگرام کی صدارت آل انڈیا اقتصادی کونسل کے چیئر مین مولانا حسیب صدیقی کی جبکہ نظامت کے فرائض مدرسہ اشرف العلوم حید آباد کے ناظم مولانا مصدق قاسمی نے انجام دیئے ۔اس موقع پر جمعیۃ علماء دیوبند یونٹ دیوبند کے سکریٹری عمیر عثمانی، سابق میونسپل چیئر مین انعام قریشی ،فیضی صدیقی، صدرالدین ،سلیم احمد عثمانی محمدعرفان، چودھری صادق،عبد الستار،قاری زبیر احمد قاسمی، قاری سرور، شعیب چودھری ،ذہین احمد،محمد طاہر شبلی ،اکرام قریشی موجودرہے۔آخر میں پروگرام کنوینر مولانا عبدالقوی نے تمام مہمانوں اور خاص طورپر مولانا عبدالقوی کاشکریہ اداکیا۔
 

...


Advertisment

Advertisment