Today: Sunday, September, 23, 2018 Last Update: 06:14 pm ET

  • Contact US
  • Contact For Advertisment
  • Tarrif
  • Back Issue

LATEST NEWS   

یوگیندر اور پرشانت کو پارٹی سے باہر نکالنے کیلئے کجریوال بضد

 

فریقین میں نہیں نکل سکی معاہدے کی کوئی شکل* ایگزیکٹیو کونسل کی میٹنگ میں باہر نکالنے پر لگ سکتی ہے مہر

نثاراحمدخان

نئی دہلی، 26مارچ (ایس ٹی بیورو) عام آدمی پارٹی میں جاری رسہ کشی اور اندرونی اختلاف تھمنے کا نام نہیں لے رہا ہے اور اب ایسا محسوس ہونے لگاہے کہ پارٹی میں آواز اٹھانے والے دو لیڈروں کی چھٹی یقینی ہے۔ کل رات ہوئی پی اے سی کی میٹنگ کے بعد آج شام کو پھر سے پی اے سی کی میٹنگ بلائی گئی ہے۔ذرائع کے مطابق دہلی کے وزیر اعلی اور پارٹی کے کنوینر اروند کجریوال اب ان دونوں لیڈروں کو پارٹی میں نہیں دیکھنا چاہتے ہیں۔ بتایا جا رہا ہے کہ اروند کجریوال پارٹی کے فاؤنڈر ممبر پرشانت بھوشن اور پارٹی کے تھنک ٹینک کہے جانے والے یوگیندر یادو کو’آپ‘ سے باہر نکالنے پر بضد ہو گئے ہیں۔ اسی معاملے پر آج شام ہو رہی میٹنگ میں بحث ہوئی ہے۔ ذرائع کے مطابق بدھ کو ہوئی پی اے سی کی میٹنگ میں پرشانت بھوشن اور یوگیندریادو سے تنازعات اور اختلافات حل کرنے کیلئے کوششوں کو جاری رکھنے کا فیصلہ کیا گیا تھا۔ میٹنگ کے بعد اروند خیمے کے کچھ لیڈروں نے پرشانت اور یوگیندر سے رابطہ بھی قائم کیا تھا۔ ذرائع کی مانیں تو دونوں فریقوں کی درمیان معاہدے کی کوئی صورت نہیں نکل پا رہی ہے، جس کی وجہ سے آپ کی پی اے سی میٹنگ آج بھی منعقد کی گئی ہے۔ ’آپ‘ کے ایک لیڈر کی مانیں تو پرشانت اور یوگیندر کے پاس نیشنل کونسل کی 28مارچ کو ہونے والی میٹنگ سے پہلے تک وقت ہے، اگر اس دوران مصالحت نہیں ہوئی تو ان کا پارٹی سے ہٹایا جانا طے ہے۔ اس کے بعد انہیں کوئی معجزہ ہی پارٹی میں برقرار رکھ سکتا ہے۔ کیونکہ بڑی تعداد میں قومی کونسل کے رکن دونوں کی سرگرمیوں کے خلاف ہیں۔ واضح رہے کہ یوگیندر یادو اور پرشانت بھوشن نے پارٹی کے طریقۂ کار کو لے کر کئی سوال کھڑے کئے تھے۔ اس کے بعد الزام تراشیوں کا طویل دور چلا تھا اور پارٹی دو حصوں میں تقسیم ہوتی دکھائی دے رہی تھی۔ آخر کار دونوں لیڈروں کو پی اے سی سے نکال دیا گیا تھا۔

 

 

...


Advertisment

Advertisment