Today: Friday, September, 21, 2018 Last Update: 05:38 pm ET

  • Contact US
  • Contact For Advertisment
  • Tarrif
  • Back Issue

LATEST NEWS   

!جنرل کٹیگری کے عازمین حج کو خانۂ کعبہ کی زیارت نصیب نہیں

 

دہلی کیلئے مختص ہیں 1163نشستیں*263مخصوص زمرہ اور 900سیٹیں 4بار سے زائد درخواست دینے والوں کیلئے مختص*233مخصوص زمرہ کے جنرل کٹیگری کے عازمین* دہلی میں امن اور خوشحالی کی دعا کریں عازمین حج : سسودیا
نثاراحمدخان

نئی دہلی، 23مارچ (ایس ٹی بیورو)دہلی کے عازمین حج کیلئے آج دہلی سکریٹریٹ میں قرعہ اندازی کاآغاز تو کیاگیا، مگر جنرل کٹیگری سے تعلق رکھنے والے عازمین اورخانۂ کعبہ کی دیدار کی خواہش رکھنے والوں کو سخت مایوسی کا سامنا کرنا پڑا۔ حج 2015 کیلئے آج قرعہ اندازی کی گئی ہے، اسے دیکھنے کے بعد اسے مضحکہ خیز بھی کہاجاسکتا ہے۔ حج 2015کیلئے دہلی کے مسلمانوں کیلئے مختص کی گئی 1163سیٹوں میں سے 263سیٹیں مخصوص زمرہ (70برس سے زائد)کیلئے مختص کردی گئی ہیں۔ باقی ماندہ 900سیٹوں کی قرعہ اندازی کی گئی، جس کیلئے 1133 درخواستیں موصول ہوئی ہیں۔ دہلی حج کمیٹی کو مجموعی طور پر 8875 درخواستیں موصول ہوئی تھیں، جس میں جنرل کٹیگری سے 7512درخواستیں موصول ہوئی تھیں، مگر سیٹیں نہ ہونے کے سبب انہیں ویٹنگ لسٹ میں ڈال دیاگیا ہے اور ویٹنگ لسٹ کنفرم ہونے کی صورت میں ہی جنرل کٹیگری کے عازمین کو موقع مل پائے گا اور انہیں حج کی زیارت نصیب ہوگی۔ قابل ذکر ہے کہ یہ پہلا موقع ہے جب حج 2015کیلئے دہلی سے کسی جنرل کٹیگری سے تعلق رکھنے والے عازمین کو موقع ملنا مشکل نظرآرہا ہے۔ دہلی سکریٹریٹ میں قرعہ اندازی تقریب کے دوران نائب وزیراعلیٰ کے ہاتھوں دہلی حج کمیٹی کی ویب سائٹ کا افتتاح بھی عمل میں آیا۔ اس موقع پر حج کمیٹی آف انڈیا کے چیئرمین قیصر شمیم، دہلی کے وزیر برائے خوراک ورسد وماحولیات عاصم احمدخان، دہلی حج کمیٹی کے چیئرمین ڈاکٹر پرویز میاں، دہلی کے ریونیوسکریٹری اشونی کمار،ممبراسمبلی عمران حسین اور حاجی اشراق کے علاوہ مولانا عبدالحنان قاسمی کے علاوہ دہلی حج کمیٹی کے چیف ایگزیکٹو افسر (سی ای او) اشفاق عارفی اور ڈپٹی سی ای او مسٹر محسن موجود تھے جبکہ کمیٹی کے کئی ممبران راجیہ سبھا ممبرپارلیمنٹ پرویز ہاشمی اورشعیب دانش نے شرکت نہیں کی جبکہ دو ممبران کی سیٹیں چودھری متین احمد اور حسن احمد کی خالی ہوگئی ہیں جو ایم ایل اے کوٹے سے بنائے گئے تھے۔ آج یہ بھی دیکھنے کو ملا کہ جن عازمین نے درخواستیں جمع کی تھیں، انہیں بھی قرعہ اندازی تقریب میں مدعو نہیں کیاگیاتھا۔ اس میں محض سرکار کے نمائندے، حج کمیٹی کے عہدیداران اور میڈیا والوں کو صرف بلایاگیاتھا اور عازمین کیلئے سکریٹریٹ کے دروازے بند کردیئے گئے تھے۔ منیش سسودیا نے اپنے خطاب کے دوران دہلی کے عازمین کیلئے کم کوٹہ ہونے پر افسوس کا اظہار کرتے ہوئے آئندہ سال اسے بڑھانے کیلئے پرزور کوشش کرنے کی یقین دہانی کرائی۔ انہوں نے حج کمیٹی آف انڈیا کے چیئرمین کو مخاطب کرتے ہوئے کہاکہ سینٹرل حج کمیٹی اور حکومت ہند سے ہماری گذارش ہے کہ دہلی کے عازمین کے کوٹے کو بڑھایاجائے، کیونکہ دہلی ملک کی راجدھانی ہے اور یہاں سبھی ریاستوں کے لوگ آکر بستے ہیں، دہلی کی آبادی میں مسلسل اضافہ ہورہا ہے، اس لئے عازمین حج کے کوٹے میں بھی خاطر خواہ اضافہ کیا جانا چاہئے۔مسٹر سسودیا نے عازمین حج سے دہلی میں امن اور خوشحالی، بدعنوان سے پاک اور بہتر سرکار قائم رہنے کیلئے دعا کی اپیل کرتے ہوئے کہا کہ خدا نے انہیں سعادت حج حاصل کرنے والوں کے انتخاب کا جو موقع دیا ہے اس کیلئے وہ اللہ کے شکرگذار ہیں اور یہ ان کی زندگی کا انتہائی بابرکت اور حسین لمحہ ہے ۔
منیش سسودیا نے کہاکہ ہرشخص کے دل میں خانۂ کعبہ کی زیارت کرنے کی خواہش ہوتی ہے، مگر سعودی عرب سرکار کی طرف سے ایک کوٹہ مقرر کردیاگیاہے، جس سے ہم آگے نہیں جاسکتے ۔ انہوں نے حج کمیٹی کو موصول ہونی والی درخواستوں، عازمین حج کی تعداد، مخصوص اور ریزرو کوٹے کی تفصیلات بھی پیش کیں۔ انہوں نے یہ بھی بتایاکہ ضابطے کے مطابق جن درخواست دہندگان کا گزشتہ 4برسوں میں قرعہ اندازی میں نام نہیں آیا ہے اور جن کی عمر70برس سے زائد ہے ، انہیں قرعہ اندازی کے بغیر ہی سفر حج پر جانے کی منظوری دی جانی چاہئے ، دہلی اسٹیٹ حج کمیٹی میں ایسے درخواست دہندگان کی تعداد اس کے مقررہ کوٹے سے زائد ہے ، اس لئے اس میں بھی کچھ عازمین کو وویٹنگ لسٹ میں رکھنا پڑے گا۔ منیشسسودیا نے بتایا کہ وزارت خارجہ، حج سیل او رحکومت کی جانب سے مرتب اور سپریم کورٹ کے ذریعے منظور شدہ ضابطے کے مطابق 70برس سے زائد عمر کے عازمین کو براہ راست سفر حج پر بھیجا جائے گا۔ اس لئے ایسے 263عازمین کو چھوڑ کر باقی ماندہ 900سیٹوں کیلئے عازمین کا ناموں کا آج انتخاب عمل میں آئے گا۔ اس کے علاوہ ویٹنگ لسٹ بھی نکالی جائے گی او رپھر ویٹنگ والوں کو موقع دیا جائے گا۔
مرکزی حج کمیٹی کے چیئرمین قیصر شمیم نے تقریب کو خطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ سال 2011کی مردم شماری کے مطابق ہندوستان کو سعودی حکومت کی طرف سے حج کا کوٹہ الاٹ کیا جاتا ہے ، جب مسلمانوں کی کل آبادی تیرہ کروڑ 82الاکھ بتائی گئی تھی، جبکہ 2011کی مردم شماری کے مطابق کوٹہ ملنا چاہئے۔مسٹر قیصر شمیم نے بتایا کہ اس سال مجموعی طور پر تین لاکھ 83ہزار افراد نے سفر حج کیلئے درخواستیں دی ہیں جبکہ مرکزی حج کمیٹی کو ایک لاکھ20 ہزار میں سے اب تک صرف 94ہزار سیٹوں کا ہی کوٹہ ملا ہے۔انہوں مزید کہا کہ عازمین کا کوٹہ بڑھانے کے سلسلے میں وزیر خارجہ سشماسوراج، نائب وزیر خارجہ جنرل وی کے سنگھ اور حکومت ہند کا ہمیشہ مثبت رویہ رہا ہے ۔ انہوں نے مزید کہا کہ مسجد حرام کے آس پاس تعمیراتی کام اس سال مکمل ہوجانے کی توقع ہے، جس کے پیش نظر آئندہ برس ہندوستان کا اس سے پہلے مقررہ ایک لاکھ 25ہزار کا کوٹہ پھر سے بحال ہونے کی امید ہے۔قیصر شمیم نے دہلی کے وزیر عاصم احمد خان سے دہلی میں حج ہاؤس کی تعمیر کیلئے مناسب جگہ دستیاب کرانے کی اپیل کی تاکہ دہلی کے شایان شان حج ہاؤس کی تعمیرکرائی جاسکے۔
دہلی کے وزیر برائے خوراک و رسداورماحولیات عاصم احمد خان نے تقریب کو خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ایک طرح سے آج خوشی کا بھی دن ہے اور غم کا بھی۔ کیونکہ قرعہ اندازی میں جن لوگوں کا نام نکلے گا، ان کیلئے یہ بابرکت اور قابل تحسین لمحہ ہوگا جبکہ جن لوگوں کانام اس بار نہیں آئے گا انہیں بہت تکلیف ہوتی ہے۔ مسٹر عاصم خان نے حج ہاؤس کی تعمیر کیلئے زمین دستیاب کرانے کی وہ ہرممکن کوشش کریں گے، جس کیلئے وہ دہلی کے وزیر اعلی اروند کجریوال سے جلد ہی بات کریں گے۔دہلی حج کمیٹی کے چیئرمین ڈاکٹر پرویز میاں نے مرکزی حکومت سے دہلی کا کوٹہ بڑھانے کا مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ سعودی حکومت اور حکومت ہند کی طرف سے الاٹ شدہ محدود کوٹے کی وجہ سے اس سال دہلی کے لوگوں کو کافی مایوسی ہوگی، اس لئے حکومت کو اس طرف خصوصی توجہ دینی چاہئے ۔دہلی حج کمیٹی کے چیئرمین ڈاکٹر پرویز میاں نے بھی دہلی والوں کیلئے نئے حج ہاؤس کی تعمیر کی غرض سے زمین الاٹ کئے جانے کی اپیل کی۔آج کی قرعہ اندازی میں دہلی سے سفر حج پر جانے والے 900عازمین کے ناموں کا انتخاب کیا گیا۔ اس کیلئے دہلی حج کمیٹی کی آج جو ویب سائٹ جاری کی گئی ہے ، وہ انتہائی معلوماتی ہے، جس میں حج او رفریضہ حج کے تمام ارکان کی ادائیگی کے طریقے اور آداب بھی بتائے گئے ہیں۔عاصم احمدخان نے اعتراف کرتے ہوئے کہاکہ عام آدمی پارٹی کی دہلی میں سرکار بنانے میں مسلمان بھائیوں کا بہت بڑا تعاون ہے، اس لئے ہم ان کے تمام مسائل حل کریں گے اور وزیراعلیٰ تک ہر بات بھی پہنچائیں گے۔ اس موقع پر عمران حسین اور حاجی اشراق نے حج 2015پر جانے والے عازمین سے دہلی کیلئے دعا کرنے کی اپیل کی۔

 

 

...


Advertisment

Advertisment