Today: Wednesday, November, 21, 2018 Last Update: 03:53 am ET

  • Contact US
  • Contact For Advertisment
  • Tarrif
  • Back Issue

LATEST NEWS   

کجریوال سرکار میں ایک بار پھر مسلمان نظرانداز

 

سرکار کے ذریعہ نامزدکئے گئے 21 پارلیمانی سکریٹریوں میں کسی مسلم ممبراسمبلی کو نہیں ملی جگہ،21میں دوخواتین بھی ہیں شامل

نثاراحمدخان
نئی دہلی، 14مارچ (ایس ٹی بیورو) دہلی سرکار نے آج 21ممبران اسمبلی کو کابینی وزراء کا پارلیمنٹری سکریٹری نامزد کیاہے۔ سرکار کے ذریعہ ممبران اسمبلی کو ایک طرح سے یہ باور کرانے کی کوشش کی گئی ہے کہ وزراء کی تعداد گرچہ محدود ہے، لیکن سرکار انہیں نظرانداز نہیں کرے گی اور وزراء کے ساتھ مل جل کر کام کرنے کی ذمہ داری سونپے گی۔ گذشتہ روز نائب وزیراعلیٰ منیش سسودیا نے اس بات کااعلان بھی کیاتھا۔ حالانکہ کانگریس سرکار اور اس کے علاوہ دوسری سرکاروں میں اب تک صرف وزیراعلیٰ کا ہی پارلیمانی سکریٹری مقرر کیاجاتا تھا۔ تاہم کجریوال سرکار کے ذریعہ نامزد کئے گئے 21پارلیمانی سکریٹری میں کی فہرست دیکھنے کے بعد ایک بار پھر مسلمانوں کو نظرانداز کیاگیاہے۔ 21پارلیمانی سکریٹری میں سرکار نے کسی مسلمان ممبراسمبلی کو شامل نہیں کیاہے۔ حالانکہ حالیہ الیکشن میں عام آدمی پارٹی کے ٹکٹ میں 4مسلم لیڈر کامیاب ہوکر ممبران اسمبلی منتخب ہوئے ہیں جس میں سے مٹیامحل کے عاصم خان کو وزیر بنایاگیاہے، لیکن سرکار کے ذریعہ آج جاری کی گئی لسٹ میں کسی بھی مسلم ایم ایل اے کانام شامل نہیں ہونے سے مسلمانوں کیلئے لمحۂ فکر ہے۔ سرکار نے ایک وزیر کیساتھ تین پارلیمانی سکریٹری نامزد کئے ہیں، جس میں دو خاتون بھی شامل ہیں۔ پروین کمار کو وزیرتعلیم کا پارلیمانی سکریٹری بنایاگیا ہے جبکہشرد کمار کووزیر محصولات، آدرش شاستری کووزیراطلاعات اینڈ ٹیکنالوجی ، مدن لال کو منسٹر آف ویجیلنس، شیوچرن گوئل کو وزیر مالیات، سنجیو جھا کو وزیر ٹرانسپورٹ، محترمہ سریتا سنگھ کو وزیر محنت، نریش یادو کو وزیرلیبر، جرنیل سنگھ (ممبراسمبلی،تلک نگر) کو وزیر ترقیات، راجیش گپتا،راجیش رشی اور انل کمار باجپئی کووزیرصحت، سوم دت کو وزیر انڈسٹریز، اوتار سنگھ کالکا کو وزیر برائے گرودوارہ الیکشن کا پارلیمنٹری سکریٹری نامزد کیاگیاہے۔ وجیندرگرگ وجے کو پی ڈبلیو ڈی وزیر کا اور جرنیل سنگھ (ممبراسمبلی،راجوری گارڈن) کو وزیر توانائی کا پارلیمانی سکریٹری بنایاگیا ہے جبکہ کیلاش گہلوت کو وزیرقانون، الکالامبا کو وزیر سیاحت، منوج کمار کو وزیر خوراک ورسد، نتن تیاگی کو وزیرخواتین واطفال اور سوشل ویلفیئر کے علاوہ ایس سی/ایس ٹی اور اوبی سی کا پارلیمنٹری سکریٹری بنایاگیا ہے۔ دہلی سرکار کا کہناہے کہ ایک وزیر کے تین تین پارلیمنٹری سکریٹری نامزد کئے جانے سے کام کاج آسان ہوجائے گا۔ پورے ملک میں وزراء کی تعداد متعین ہے، اسی طرح دہلی میں 6ریاستی وزراء بنائے جاسکتے ہیں، اس لئے کام کاج کو بہتر طریقے سے چلانے کیلئے ایسا کیاگیاہے۔ حالانکہ پارلیمانی سکریٹری اور وزیر کا درجہ برابر ہوتا ہے، مگر آج نامزد کئے گئے 21پارلیمانی سکریٹری کو وزراء کی طرح گھر اور دفتر کی سہولت نہیں دی جائے گی۔ حالانکہ وہ وزراء کے ساتھ بیٹھ کر کام کرتے رہیں گے اور ان کے ہاتھ بٹائیں گے۔

 

 

...


Advertisment

Advertisment