Today: Tuesday, November, 13, 2018 Last Update: 10:28 pm ET

  • Contact US
  • Contact For Advertisment
  • Tarrif
  • Back Issue

LATEST NEWS   

بدعنوان تاجروں پر لگام کسنے کی تیاری میں دہلی سرکار!

 

صارفین کے مفادات کے مدنظر متعلقہ محکموں کو جاری کیا ہائی الرٹ ، قوانین کی خلاف ورزی کرنے والے تاجروں کیخلاف شکایت کرنے کیلئے جاری کیا لینڈلائن نمبر
نئی دہلی،13اکتوبر( ایس ٹی بیورو) دہلی حکومت کے کھانے کی فراہمی اور صارفین معاملے محکمہ نے 20 ٹیموں کی تشکیل کی ہے، جو اس تیہوار کے دوران دہلی کے ذخیرہ اندوزوں اور کالابازا ری میں ملوث تاجروں کیخلاف وسیع و فوری کارروائی کر رہی ہیں۔ عام طور پر تہوار کے دوران ڈبہ بند اشیاء کے فروخت کو لے کر محکمہ میں شکایتیں آتی ہے.یہ شکایتیں ضروری اشیاء کی قیمتوں میں اضافہ کیساتھ ساتھجمع خوری اور کالابازاری سے متعلق ہوتی ہیں۔جمع خور غیر قانونی فائدہ کیلئے اشیاء کی قیمتوں میں مصنوعی اضافہ کر خریداروں کو بے حد پریشان کرتے ہیں ۔ اس قسم کی شکایات کو لے کر حکومت سنجیدہ ہے اور ملزمین کو بخشا نہیں جائے گا۔ یہ معلومات دہلی کے کھانے کی فراہمی اور صارفین معاملوں کے سیکرٹری شریک کمشنر مسٹر شرسجن سنگھ یادو نے فراہم کی۔ انہوں نے مزید کہا کہ دہلی حکومت کے کھانے کی فراہمی محکمہ کی یہ تمام ٹیمیں یہ یقینی بنائیں گی کہ لوگوں کو واجب قیمتوں پر تمام ضروری چیزیں دستیاب ہو سکیں۔160
مسٹر سجن سنگھ یادو بتایا کہ ڈبے اشیاء قانون2011 کے طور پر پہلے سے پیک کئے ہوئے / ڈبے اشیاء کی فروخت میں صارفین کو دھوکہ دہی سے بچانے کے بھی کارگر قدم اٹھائے جا رہے ہیں۔ ہر پیکٹ پر تحریری طور پر سادہ، یقینی اور مخصوص اعلان ضروری ہے، جو کہ مندرجہ ذیل ہے: 160
بنانے اور پیک کرنے والوں کے نام اور پتہ درآمد پیکٹ چیز کے معاملے میں درآمد کنندہ کا نام اور پتہ درج ہونا چاہئے۔پیکٹ میں موجود چیز کا عام یا معمول نام۔ پیکج میں موجود چیز کی خالص مقدار۔ جہاں اشیاے کو تعداد سے فروخت کیا جاتا ہے، تو وہاں شئی کی تعداد کی واضح تفصیل۔ اشیاء کے تعمیر اور پیک کا ماہ و سال کی تفصیل یا اگر شئی درآمد کی گئی ہے تو درآمد کا ماہ و سال کی تفصیل۔ پیکٹ شئی کا خوردہ فروخت کی قیمت۔ جہاں پیکٹ شئی کا سائز متعلق ہے ، وہاں شئی کے طول و عرض پیکج میں موجود ہو۔160
مسٹر یادو نے مزید کہا کہ ان دفعات کی خلاف ورزی لیگل میٹرولوجی ایکٹ، 2009 کے تحت قابل سزا جرم ہے۔ ہرشئی کی پیمائش کے آلہ اور وزن کا واٹ محکمہ کی طرف سے تصدیق کیا ہوا ہونا چاہئے۔ صارفین کو اس بات کا یقین کرنا چاہئے وزن ترازو۔ مشین اور دیگر سامان درست ہیں اور سرٹیفکیٹ میں اہمیت سے کاروبار کا احاطہ ظاہر کیا گیا ہو۔160
کھانے کی فراہمی اور صارفین معاملے محکمہ کے سکریٹری شریک کمشنر مسٹرسجن سنگھ یادو نے آج بتایا کہ دہلی حکومت نے تہوار کے موسم کے دوران دارالحکومت میں صارفین کے مفادات کی حفاظت کرنے کیلئے اور دھوکہ دہی کی روک تھام کیلئے 20 خصوصی ٹیم تشکیل دی ہے، جس نے گزشتہ ایک ماہ کے دوران 1825 تجارتی احاطے کا وسیع معائنہ کیا ہے اور قوانین کی خلاف ورزی کر صارفین کو دھوکہ دینے کے الزام میں 731 تاجروں پر کیس درج کیا ہے۔ ان میں سے 431 تاجروں کے خلاف پہلے سے ڈبہ بند شئی قانون ایکٹ 2011 کے تحت معاملہ درج کیا گیا ہے اور 300 تاجروں پرغیر منظور شدہ میٹر / واٹ کا استعمال کرنے کے الزام میں مقدمہ درج کیا گیا ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ محکمہ نے گزشتہ ایک ماہ میں مجرم تاجروں سے 21.73 لاکھ روپے کی جرمانہ رقم کی بھی وصولی کی ہے اور اس کے ساتھ ہی متعلقہ عدالت میں معاملہ بھی درج کیا ہے۔160
مسٹر یادو نے کہا کہ صارفین کے مفادات کی حفاظت کرنے کیلئے اس قسم کی مہم آگے بھی جاری رہے گی۔ محکمہ کے پیمائش اور تول یونٹ کے تمام افسران کو اس تہوار کے موسم کے دوران ہائی الرٹ پر رہنے کیلئے کہا گیا ہے۔ انہوں نے دارالحکومت کے صارفین سے اپیل کی کہ اشیاء کی خریداری میں چوکسی برتیں اور اگر کوئی تاجر جمع خوری یا کالابازاری میں ملوث پایا جاتا ہے یا زیادہ قیمت کی وصولی کرتا ہے تو محکمہ کی روشنی میں ضرور لائیں یا011-23379267 پر شکایت بھی درج کروا سکتے ہیں ۔

...


Advertisment

Advertisment