Today: Wednesday, November, 21, 2018 Last Update: 10:10 am ET

  • Contact US
  • Contact For Advertisment
  • Tarrif
  • Back Issue

LATEST NEWS   

گستاخانہ خاکوں کے خلاف وادی کشمیر میں مکمل ہڑتال

 

نماز جمعہ کے بعد احتجاجی مظاہرے ، سیول لائنز کے مائسمہ علاقے میں دفعہ 144 کے تحت پابندیاں عائد
سری نگر،23 جنوری (یو این آئی) فرانس کے ہفتہ روزہ جریدے چارلی ہیبڈومیں گستاخانہ خاکوں کی اشاعت کے خلاف وادی کشمیر میں جمعہ کے روز مکمل ہڑتال کی گئی۔نماز جمعہ کی ادائیگی کے بعد وادی کی مساجد سے اس مذموم حرکت کے خلاف احتجاجی ریلیاں نکالی گئیں ۔احتجاجی ریلیوں میں شامل مظاہرین نے اپنے ہاتھوں میں بینرس اور پلے کارڈس اٹھا رکھے تھے جن پر مذمتی تحریریں درج تھیں۔ متحدہ علماء اہل سنت جموں وکشمیر نے ہڑتال کی اپیل کی تھی۔جبکہ سخت گیر حریت کانفرنس، جموں وکشمیر لبریشن فرنٹ، بار ایسوسی ایشن ، کاروان اسلامی جموں وکشمیر اور انجمن حمایت الاسلام نے ہڑتال کی تائید و حمایت کی تھی۔ ہڑتال کی وجہ سے وادی بھر میں معمول کی زندگی مفلوج ہوکر رہ گئی۔ سری نگر اوروادی کے دوسرے ضلعی ہیڈکوارٹروں میں ہڑتال کا خاصا اثر دیکھا گیا۔سری نگر میں تمام دکانیں اور تجارتی مراکز بند رہے جبکہ پبلک ٹرانسپورٹ سڑکوں سے غائب رہا۔ سرکاری و نجی دفاتر میں کام کاج ٹھپ رہا، بینک بند رہے جبکہ ٹیوشن سینٹروں میں تعلیمی سرگرمیاں معطل رہیں ۔ انتظامیہ نے سری نگر میں امن وامان کی صورتحال برقرار رکھنے کیلئے سیکورٹی فورسز کی اضافی نفری تعینات کردی تھی جبکہ سیول لائنز کے مائسمہ علاقے میں دفعہ 144 کے تحت پابندیاں عائد کردی گئی تھیں۔ سیکورٹی فورسز نے مائسمہ جانے والے تمام راستوں کو خاردار تار لگاکر سیل کردیا تھا۔مذکورہ علاقے میں لوگوں کی نقل وحرکت پر پابندی عائد کردی گئی تھی ۔ قابل ذکر ہے کہ جموں وکشمیر لبریشن فرنٹ کا دفتر مائسمہ میں ہی واقع ہیں۔ مائسمہ کے علاوہ بڈشاہ چوک سے لیکر تاریخی لال چوک تک کئی سڑکوں کو خاردار تار بچھاکر بند کردیا گیا تھا ۔ علیحدگی پسند لیڈروں کو احتجاجی ریلیوں کی قیادت کرنے سے روکنے کیلئے یا تو اپنے گھروں میں نظر بند کردیا گیا تھا یا حفاظتی تحویل میں لے لیا گیا تھا جن میں جموں وکشمیر لبریشن فرنٹ کے چیرمین محمد یاسین ملک، سخت گیر حریت کانفرنس لیڈران بشمول محمد اشرف صحرائی، ترجمان ایاز اکبر، پیر سیف اللہ اور دیگر علیحدگی پسند لیڈران شبیر احمد شاہ اور نعیم احمد شامل ہیں۔سخت گیر حریت کانفرنس کے ترجمان ایاز اکبر نے بتایا کہ مجھ سمیت دیگر تین سینئر لیڈران کو گذشتہ شام سے نظربند رکھا گیا ہے ۔ جموں وکشمیر لبریشن فرنٹ کے ایک ترجمان نے بتایا کہ چیرمین محمد یاسین ملک جنہیں شہر خاص میں واقع خانقاہ معلی میں نماز جمعہ کی ادائیگی کے بعد ایک احتجاجی ریلی کی قیادت کرنا تھی، کو گذشتہ شام حفاظتی تحویل میں لیا گیا۔ انہوں نے بتایا کہ مسٹر یاسین ملک کو پولیس اسٹیشن کوٹھی باغ میں بند رکھا گیا ہے ۔

 

 

...


Advertisment

Advertisment