Today: Thursday, November, 22, 2018 Last Update: 01:56 am ET

  • Contact US
  • Contact For Advertisment
  • Tarrif
  • Back Issue

BUSINESS NEWS   

پیٹرول کی اکسائز ڈیوٹی میں 225 روپئے اور ڈیژل میں ایک روپئے فی لیٹر کا اضافہ

پیٹرول کی اکسائز ڈیوٹی میں 225 روپئے اور ڈیژل میں ایک روپئے فی لیٹر کا اضافہ

 

نئی دہلی: حکومت نے بین الاقوامی سطح پر خام تیل کی قیمت میں مسلسل جاری گراوٹ کا فائدہ اٹھاتے ہوئے ریونیو میں اضافہ کے مقصد سے آج پیٹرول کی اکسائز ڈیوٹی میں 225 روپئے اور ڈیژل میں ایک روپئے فی لیٹر کا اضافہ کردیا۔پارلیمنٹ میں پیش کردہ نوٹیفکیشن کے مطابق غیربرانڈڈ پیٹرل پر اکسائز ڈیوٹی 270 روپئے سے بڑھ کر 495 روپئے فی لیٹر ہوگئی ہے۔ اسی طرح برانڈڈ پیٹرول پر یہ 385 روپئے سے بڑھ کر 610 روپئے فی لیٹر ہوگئی ہے۔ غیر برانڈڈ ڈیزل پر یہ 296 روپئے سے بڑھ کر 396 روپئے اور برانڈڈ ڈیزل پر 525 روپئے سے بڑھ کر 625 روپئے فی لیٹر ہوگئی ہے۔اکسائز ڈیوٹی میں اس اضافہ سے رواں مالی سال کی باقی مدت میں حکومت کو 4000 کروڑ روپئے کا اضافی ریونیو حاصل ہونے کا اندازہ ہے۔ قبل ازیں اکسائز ڈیوٹی میں اضافہ سے 6 ہزار کروڑ روپئے کا ریونیو حاصل ہونے کی امید ہے۔
ایسا خیال کیا جا رہا ہے اکسائز ڈیوٹی میں اضافہ کا بوجھ صارفین پر نہیں ڈالا جائے گا۔ گزشتہ 12 نومبر کو پیٹرول اور ڈیزل کی ایکسائز ڈیوٹی میں کئے گئے ڈیڑھ۔ڈیڑھ روپئے فی لیٹر کے اضافہ کا بوجھ صارفین پر نہیں ڈالا گیا تھا۔ گزشتہ تین ہفتوں میں دوسری بار اکسائز ڈیوٹی میں اضافہ کیا گیا ہے۔غیرملکی بازاروں میں خام تیل کی قیمت گھٹنے سے گھریلو سطح پر تیل کی کاروبار کرنے والی کمپنیوں نے پیٹرول کی قیمت میں 91 پیسے اور ڈیژل میں 84 پیسے فی لیٹر کی کمی کی ہے۔ پیٹرول کی قیمت اگست کے بعد مسلسل ساتویں بار اور ڈیزل کی مسلسل تیسری بار کم کی گئی ہے۔

 

...


Advertisment

Advertisment